Type to search

اسپورٹس

محمد اظہر الدین کے خلاف ایف آئی آر درج، 21 لاکھ روپے کی دھوکہ کا الزام

Azharuddin coach Indian team

حیدرآباد،23جنوری(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) سابق ہندوستان کرکٹر  اور حیدرآباد کرکٹ اسوسی ایشن کے صدر محمد اظہر الدین بڑی مشکل میں پھنس گئے ہیں۔ مہاراشٹرا کے ایک ٹراویل اینجنٹ نے اظہرالدین سمیت تین لوگوں کے خلاف اورنگ آباد کے تھانے میں ایف آئی آر درج کرائی ہے۔ پولیس نے اس پر جانچ شروع کردی ہے۔

اورنگ آباد کے دانش ٹور اینڈ ٹراویلس ایجنسی کے مالک محمد شاداب نے اظہرالدین پر 20.96 کی دھوکہ دہی کا الزام لگایا ہے۔ انکا کہنا ہے کہ انہوں نے اظہرالدین کے پی اے مجیب خان کے کہنے پر اظہرالدین اور دو لوگوں کے لیے پچھلے سال نومبر میں بین الاقوامی ٹکٹ بک کیے تھے، جسکے پیسے انہیں ابھی تک نہیں ملے ہیں۔

حالانکہ ان سب الزامات کو اظہرالدین نے بے بنیاد بتایا ہے۔ انہوں نے اپنے ٹیوٹر ہینڈل سے ویڈیو شیئر کرکے الزامات پر صفائی دی۔ انہوں نے کہا،  مجھ پر لگائے گئے الزاما بے بنیاد ہے۔ جس نے یہ کیا ہے وہ صرف سرخیوں میں رہنے کے لیے کیا ہے۔ میں جلد ہی اپنے وکیل سے بات کرونگا اور شکایت درج کرنے والے کے خلاف ہتک عزت کا کیس کرونگا۔

I strongly rubbish the false FIR filed against me in Aurangabad. I’m consulting my legal team, and would be taking actions as necessary pic.twitter.com/6XrembCP7T

— Mohammed Azharuddin (@azharflicks) January 22, 2020

مڈ۔ڈے کی خبر کے مطابق شاداب نے کہا، میں انہیں کافی سالوں سے جانتا ہوں، اور اب تک کئی بار انکے لیے ٹکٹ بک کرا چکا ہوں، پچھلی بار انہوں ن ے مجھے اظہرالدین کے لیے یوروپ کے دو  ٹکٹ بک کرنے کو کہا تھا۔ جو یوروپ جانے کے لیے پہلے ممبئی سے دبئی گئے اور پھر واپسی کے دوران دہلی ہوتے ہوئے ممبئی آئے۔ اس سب کا خرچ کل ملا کر 20.96 لاکھ تھا۔ مجھے پہلے کبھی پیسے کو لیکر کوئی پریشانی ہوئی تو مجھے بھروسہ تھا۔

شاداب خان نے شکایت میں آگے بتایا کہ انہیں ای۔ میل کرکے معلومات دی گئی کہ ایک کروشیا کے بینک سے انکی قیمت کا 50 فیصد یعنی تقریبا 10.50 لاکھ روپے انہیں بھیج دیا گیا ہے جبکہ ایسا ہوا نہیں۔ شاداب نے اس بینک میں فون کرکے معلوم کیا تو انہوں نے صاف کیا گیا کہ کوئی ٹرانزیکشن نہیں ہوئی ہے۔اسکے بعد انہوں نے ایف آئی آر درج کرانے کا فیصلہ کیا۔

Tags:

You Might also Like