Type to search

ٹی وی اور فلم

ساؤتھ فلموں کی اداکارہ رخسار ڈھلون

رخسار ڈھلون

فلمی ڈسک، 30 اپریل (اردو پوسٹ) اداکار وکی کوشل کے بھائی سنی کوشل کی فلم ‘بھنگڑا پا لے’ سے بالی ووڈ میں ڈیبیو کرنے والی اداکارہ رخسار ڈھلون آج کسی پہچان کی محتاج نہیں ہے-

 

 

 

اداکارہ ان دنوں اپنی سوشل میڈیا پر شیئر کی گئی تصویروں کی وجہ سے سرخیوں میں ہے- انہوں نے براؤن کلر کی بکنی میں کچھ تصویریں شیئر کی ہے- جو کافی وائرل ہورہی ہیں-

 

 

 

 

رخسار ڈھلون کی پیدائش 12 اکتوبر 1993 کو لندن میں ہوئی- وہ ایک پنجابی گھرانے سے تعلق رکھتی ہے- پیدائش کے چھ ماہ بعد میرے والدین گوا شفٹ ہوگئے، اور وہاں اپنا کاروبار شروع کیا تھا۔ اور وہی مانویکاس انگلیش میڈیم اسکول سے تعلیم حاصل کی، اٹھویں کلاس کے بعد بنگلور کے بالڈون گرلز ہائی اسکول میں آگے کی تعلیم حاصل کی، پھر بنگلور یونیورسٹی سے فیشن ڈیزائننگ کی ڈگری کی-

 

 

 

 

 

رخسار نے اپنے کیریئر کا آغاز ساؤتھ فلم انڈسٹری سے کیا۔ رخسار کی پہلی فلم ‘رن انٹونی’ سال 2016 میں ریلیز ہوئی تھی۔ اس فلم سے انہوں نے کنڑ فلم انڈسٹری میں ڈیبیو کیا۔

 

رخسار فیشن ڈیزائننگ کورس کرکے اپنے خاندان کا بوتیک بزنس سنبھالنا چاہتی تھی- رخسار اپنے کیریئر کی شروعات کنڑ سینما سے کی-

 

 

 

تیلگو سینما کے سپر اسٹار نانی کے ساتھ کرشنا ارجن یودھم جیسی ہٹ فلم کرنے کے بعد ہندی سینما میں کیریئر بنانا رخسار کے لیے اتنا آسان نہیں تھا-

 

 

 

ساؤتھ میں رخسار کی شروعات کنڑ فلم رن انٹونی سے ہوئی- اسکے بعد انہوں نے تیلگو فلم اکاتائی ، کرشنا ارجن یودھم، اے بی سی ڈی-امریکن بورن کنفیوز جیسی فلمیں کی-

 

یہ کہنا ضروری ہے کہ رخسار ڈھلوں بطور ہیروئن کلک نہیں ہوئی۔ چونکہ ان کی تمام فلمیں بھی باکس آفس پر فلاپ ہوئیں-

 

 

فلاپوں کا ایک سلسلہ رخسار ڈھلون کے لیے ایک مصیبت بن گیا، فینس کو ٹاپ ہیروئن ہونے کی امید تھی۔

 

 

رخسار ڈھلوں کی سوشل میڈیا پر شیئر کی گئی تازہ ترین تصاویر وائرل ہو رہی ہیں۔

اداکارہ رخسار ڈھلون انسٹاگرام پر کافی متحرک ہے اور انکے کئی فینس ہیں۔

Tags:
Sabiha Banu

اردو پوسٹ میں ڈیجیٹل کنٹینٹ پروڈیوسر کے طور پر کام کرنے والی صبیحہ بانو کو میڈیا میں آٹھ سال سے زیادہ کا تجربہ ہے۔ ان کی مہارت تفریحی رپورٹنگ، تحریر، فلمی جائزے اور تجزیہ میں ہے۔ صبیجہ بانو نے مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی، حیدرآباد سے ماس کمیونیکیشن میں پوسٹ گریجویشن اور اردو سے ایم ۔فل کیا ہے۔ صبیجہ بانو نے آل انڈیا ریڈیو میں بطور پروگرام اناونسر خدمات انجام دیتی ہیں۔ اسکے علاوہ صبیجہ مختلف شعبوں میں خدمات انجام دی ہیں۔

  • 1

You Might also Like