Type to search

قومی

چھ سال کی بچی نے آنکھوں پر پٹی باندھ کر حل کیا روبک پزل

چنئی،26 نومبر(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) تامل ناڈو کی ایک چھوٹی سی بچی نے ایک ایسا کارنامہ کردیا ہے جسے دیکھ کر ہر کوئی حیران ہے- اس وجہ سے اس بچی کو دنیا کی سب سے چھوٹی علقمند (جینیس) ذہین کا خطاب دیا گیا ہے- سارہ نام کی اس 6 سال کی بچی کو تامل ناڈو کیوب ایسوسی ایشن نے دنیا کی سب سے چھوٹی جینیس کے خطاب سے نوازا ہے- آپ کو بتادیں کہ سارہ نے صرف 2 منٹ 7 سکنڈ میں آنکھیں بند کرکے روبکس کیوب حل کرنے کا ریکارڈ بنایا ہے-

دراصل سارہ گنیز ورلڈ ریکارڈ بنانے کی کوشش کررہی تھی اسکے اس کارنامے کو دیکھ سب حیران رہ گئے- سارہ کی اس قابلیت کے بارے میں بات کرتے ہوئے اسے والد چارلیس نے نیوز ایجنسی کو بتایا، سارہ نے بہت ہی کم عمر میں اپٹیٹیوڈ سوالوں کو حل کرنا شروع کردیا تھا، جسکے بعد جیسے ہی ہماری توجہ سارہ کی اس قابلیت پر گئی تو ہم نے اسے اچھی تعلیم دینا شروع کیا- سارہ کے والد نے آگے کہا کہ وہ پہلے ہی ریکارڈ بنا چکی ہے اور اب وہ گنیز ورلڈ ریکارڈ بنانے کی کوشش کررہی ہے- سارہ کافی تیزی سے پہلیوں اور اپٹیٹیوڈ سوالوں کو حل کرلیتی ہے- وہ صرف یہی نہیں کئی دیگر طرح کی کیوب پہلیوں کو بھی حل کرسکتی ہے-

نیوز ایجنسی نے اپنے ٹیوٹر ہینڈل پر سارہ کی تصویر شیئر کی اور لکھا- تامل ناڈو کیوب ایسوسی ایشن نے سارہ کو دنیا کی سب سے چھوٹی جینیس اعلان کیا ہے- سارہ نے بھی ایجنسی سے بات کرتے ہوئے کہا، میں اس ایونٹ کا حصہ بن کر بے حد خوش ہوں-

آپ کو بتادیں کہ روبکس کیوب کو بنیادی طور پر میجک کیوب کہا جاتا ہے- یہ 3 ڈی ٹیوسٹ پہیلی ہے- جسکی ایجاد 1974 میں ہنگری کے مجسمہ ساز اور آرکیٹیکٹ پڑھانے والے پروفیسر ایرنو روبک نے کیا تھا-

Tags:

You Might also Like