Type to search

Uncategorized

ثانیہ مرزا اپنا آخری گرینڈ سلیم فائنل نہیں جیت سکی، لیکن الوداعی تقریر سے جیتا دل

ثانیہ مرزا

اسپورٹس ڈسک، 28 جنوری (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) آسٹریلین اوپن 2023 فائنل: ہندوستان کی اسٹار کھلاڑی ثانیہ مرزا نے اپنے ساتھی ہم وطن روہن بوپنا کے ساتھ ملبورن میں جمعہ کو آسٹریلین اوپن ٹینس ٹورنامنٹ کے مکسڈ ڈبلز میں رنر اپ رہ کر اپنے گرینڈ سلیم کیریئر کا اختتام کیا۔

 

 

 

ثانیہ نے اپنے کیریئر میں چھ گرینڈ سلیم ٹائٹل جیتے، جس میں تین ویمنز ڈبلز اور اتنے ہی مکسڈ ڈبلز ٹائٹل شامل ہیں۔

 

ثانیہ مرزا روہن بوپنا کی غیر سیڈڈ جوڑی کو راڈ لیور ایرینا میں کھیلے گئے فائنل میں لوئیسا سٹیفانی اور رافیل میٹوس کی برازیل جوڑی سے 6-7 (2) 2-6 سے شکست کا سامنا کرنا پڑا۔

 

میچ کے بعد ثانیہ مرزا جذباتی ہوگئیں اور بمشکل اپنے آنسو روک سکیں۔

 

انہوں نے کہا اگر میں روتی ہوں تو یہ خوشی کے آنسو ہوں گے۔ مجھے ابھی دو اور ٹورنامنٹ میں حصہ لینا ہے لیکن میرے پیشہ ورانہ کیریئر کی شروعات میلبورن سے ہوئی تھی-

 

ثانیہ نے بوپنا کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا، مکڈ ڈبلز میں روہن میرا پہلا جوڑی دار تھا- تب میں 14 سال کی تھی اور ہم نے قومی ٹائٹل جیتا تھا-

یہ 22 سال پرانی بات ہے اور میں اپنے کیریئر کو ختم کرنے کے لیے اس سے بہتر شخص کے بارے میں نہیں سوچ سکتی- وہ میرا بہترین دوست اور میرے بہترین جوڑی داروں میں سے ایک ہے-

بوپنا (42 سالہ) نے فرنچ اوپن کے طور پر مکسڈ ڈبلز کا ایک گرینڈ سلیم خطاب جیتا ہے-

ثانیہ ابھی 36 سال کی ہے اور انہوں نے پہلے ہی اعلان کردیا تھا کہ دبئی میں اگلے مہینے ہونے والی ڈبلیو ٹی اے ٹورنامنٹ انکے کیریئر کا آخری ٹورنامنٹ ہوگا- وہ ہندوستان کی سب سے کامیاب خاتون ٹینس کھلاڑی ہیں۔

 

 

ثانیہ نے مہیش بھوپتی کے ساتھ مل کر 2009 میں آسٹریلین اوپن اور 2012 میں فرنچ اوپن میں مکسڈ ڈبلز ٹائٹل جیتا تھا۔ سال 2014 میں برازیل کے برونو سواریس کے ساتھ مل کر یو ایس اوپن کا مکسڈ ڈبلز ٹائٹل جیتا تھا۔

Tags:

You Might also Like