Type to search

بین الاقوامی

سیکھ پولیس افسر سندیپ سنگھ دھالیوال کے نام پر ہیوسٹن کے ڈاک گھر کا نام رکھنے کی تجویز امریکی کانگریس میں پیش

ہویسٹن،7ڈسمبر(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) امریکی کانگریس میں ایک تجویز لائی گئی ہے جس میں ہیوسٹن کے ایک ڈاک گھر کانام مرحوم ہند نژاد امریکی سیکھ پولیس افسر سندیپ سنگھ دھالیوال کے نام پر رکھنے کی تجویز کی گئی ہے۔ سندیپ سنگھ (42) ہیرس کاؤنٹی میں شیریف کے ماتحت کام کرنے والے پہلے سیکھ افسر تھے جنہیں سیکھ مذہب کی روایتی طور پر داڑھی رکھنے اور پگڑی پہننے کی اجازت دی گئی تھی۔ ہیوسٹن کے شمال مغرب میں 27 ستمبر کو سندیپ کو گولی مار کر قتل کردیا گیا تھا۔  اس وقت وہ ڈیوٹی پر تھے۔ ایم پی لیزی فلیچر نے یہ بل پیش کیا۔ اس میں 315 ایڈکس ہویل روڈ   پر واقع ڈاک گھر کا نام ڈپٹی سندیپ سنگھ دھالیوال پوسٹ آفس‘ رکھنے کی مانگ کی گئی ہے۔ انہوں نے کہا، ڈپٹی دھالیوال نے کمیونٹی کی بہترین نمائندگی کی ہے۔ انہوں نے سرویس کے دوران مساوات، رابطہ اور کمیونٹی کے لیے کام کیا۔

انہوں نے کہا کہ ڈاک گھر کا نام  دھالیوال کے نام پر رکھنے سے یہ انکی سرویس اور انکی قربانی اور ہمارے لیے انکی مثال کی ہمیشہ یاد دلاتا رہے گا۔ ہیرس کاؤنٹی کے شیرف ایڈ گونزالیز نے کہا، ڈپٹی دھالیوال ہمارے  آفس اور اس کمیونٹی کے ایک  سرشار ممبر ہے جس نے پوری سالمیت کے ساتھ سرویس دی ہے۔ انکی اس خدمات اور قربانی کو  اعزاز دینے کی خاطر یہ بل لانے کے لیے ایم پی لیزی فلیچر کا شکریہ۔

Tags: