Type to search

تلنگانہ

کالے قانون کے خلاف 10 جنوری کو عیدہ گاہ سے شاستری پورم تک ریالی:بیرسٹر اسدالدین اویسی

حیدرآباد،7جنوری(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) شہر حیدرآباد میں شہریت قانون کے خلاف 10 جنوری کو پرامن ریالی نکالی جائے گئی۔ بیرسٹراسدالدین اویسی صدر کل ہند مجلس اتحاد المسلیمن ورکن پارلیمنٹ حیدرآباد نے کہا کہ شہریت ترمیمی قانون، این پی آر اور این سی آر خلاف مشترکہ مجلس عمل کے زیراہتمام جمعہ 10 جنوری کو بعد نماز جمعہ احتجاجی ریالی عیدہ گاہ میرعالم سے شاستری پورم گراؤنڈ تک نکالی جائے گی۔

ریالی کے سلسلہ میں پیر کے روز پارٹی آفس دارالسلام میں ایک اجلاس منعقد ہوا جس میں بیرسٹر اسداویسی اور مجالس کے صدر و معتمدین اور سرگرم کارکنان نے اجلاس میں اپنے خیالات کا اظہار کیا۔ اجلاس میں مجلسی ارکان مقننہ جناب سید احمد پاشاہ قادری معتمدی عممومی مجلس، جناب ممتاز احمد خان، جناب محمد معظم خاں، جناب احمد بلعلہ، جناب جعفر حسین معراج ، جناب کوثر محی الدین ، جناب سید امین الحسن جعفری، جناب مرزا ریاص الحسن آفندی کے علاوہ مجلسی کارپوریٹرس ، نمائندہ کارپوریٹرس ، سابق کارپوریٹرس ، ابتدائی مجالس کے صدر ومعتمدین اور سرگرم کارکنان شریک تھے۔

اس ریالی کو کامیاب اور پرامن بنانے کی اویسی نے اپیل کی۔ اور بڑی تعداد میں شرکت کرکے اسے کامیاب بنانے اور اپنا احتجاج درج کرانے کی اپیل کی۔ انہوں نے کہا کہ اگر خواتین اس ریالی میں حصہ لینا چاہتی ہے تو وہ شریک ہوسکتی ہے۔ انہوں نے کہا ریالی کے دوران ایمبولینس کو جگہ فراہم کی جائے۔ انہوں نے شہر کے تمام مساجد میں بھی اس ریالی کا اعلان کروانے کے لیے کہا، ریالی میں کسی قسم کا شر نہ ہو اس لیے لوگوں پر نظر رکھنے کے لیے کہا گیا، سٹی پولیس کی جانب سے شہر میں احتجاجی ریالی کی اجازت سے انکار کی وجہ سے راجندرنگر اور شیورام پلی پولیس حدود میں یہ ریالی نکالی جارہی ہے۔ اس ریالی میں مشترکہ مجلس عمل کے ذمہ داران، مجسلی ارکان اسمبلی و کونسل ، کارپوریٹرس، ابتدائی مجالس کے صدر ومعتمدین سرگرم کارکنان تمام شامل رہیں گے۔

Tags:

You Might also Like