Type to search

ٹی وی اور فلم

کون ہے پائل گھوش جنہوں نے انوراگ کشیپ پر جنسی ہراسانی کا الزام لگایا

پائل گھوش

فلمی ڈسک،21 ستمبر (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) بالی ووڈ کے مشہور فلمساز انوراک کشپ پر ایک اداکارہ پائل گھوش نے جنسی استحصال کا الزام لگایا ہے۔ پائل گھوش نے ٹویٹ کرکے یہ الزام لگایا ہے کہ تقریبا 15-2014 کے قریب انوراگ سے انکی ملاقات ہوئی تھی اور انہوں نے شراب کے نشے میں پائل گھوش کے ساتھ زور زبردستی کرنے کی کوشش کی۔ اس خبر کے بعد پائل اچانک سرخیوں میں آگئی۔

قومی خواتین کمیشن کی صدر ریکھا شرما نے اتوار کے روز کہا کہ اداکارہ پائل گھوش کی جانب سے بالی ووڈ کے مشہور ہدایت کار انوراگ کشیپ کے خلاف جنسی استحصال کے الزامات کی جانچ کی جائے گی۔

محترمہ شرما نے کہا کہ انہوں نے اداکارہ سے کمیشن اور متعلقہ تھانے میں اس معاملے کی شکایت درج کرانے کے لئے کہا ہے۔

پائل گھوش نے اپنا ہندی ڈیبیو سال 2017 میں آئی فلم پٹیل کی پنجابی شادی سے کیا۔ اس فلم کا ڈائریکشن سنجے چائل نے کیا تھا۔ فلم میں پائل کے ساتھ رشی کپور، پریش راول اور پریم چوپڑا جیسے بڑے اسٹارس تھے مگر یہ فلم فلاپ ہوگئی۔

پائل گھوش 13 نومبر 1989 کو کولکتہ میں پیدا ہوئی، انہوں نے سینٹ پال مشن اسکول کولکتہ سے تعلیم حاصل کی۔ اور ایک اداکارہ ہے اور انہوں نے ہندی، بنگالی اور تیلگو زبان کی فلموں میں کام کیا ہے۔ انہوں نے ایک بنگالی فلم سے اداکاری کی شروعات کی تھی۔ 

 پائل گھوش کے بارے میں انٹرنیٹ اور وکیپیڈیا پر بہت ذیادہ معلومات نہیں ہے۔ حالانکہ اس میں یہ بتایا گیا ہے کہ پائل نے کولکتہ کے سکاٹش چرج کالج سے پولیٹیکل سائنس آنرس میں گریجویشن کی ڈگری لی ہے۔

پائل گھوش نے اپنا ایکٹینگ ڈیبیو صرف 17 سال کی عمر میں بی بی سی کی انگلیش ٹیلی فلم شارپ پرل سے سال 2008 میں کی تھی۔ فلم کی کہانی ایک انگریزی رچرڈ شارپ کی تھی جس میں پائل نے بنگال کے ایک گاؤں میں رہنے والے مجاہد آزادی (فریڈم فائٹر) کی بیٹی کا رول نھبایا تھا۔

اسکے بعد پائل ایک کینیڈائی فلم میں بھی کام کیا تھا جس میں انہوں نے ایک ایسی اسکول کی لڑکی کا کردار نبھایا تھا جسے اپنے پڑوسی کے نوکر سے پیار ہوجاتا ہے۔

پائل گھوش کے ویکیپیڈیا پیج کے مطابق انکا خاندان فلموں میں کام کرنے کے خلاف تھا۔ اس لیے کالج کی چھوٹیوں کے دوران پائل کولکتہ سے ممبئی آگئی۔ ممبئی میں آنے کے بعد پائل نے نمت کشور کے ایکٹینگ اسکول میں داخلہ لیکر ایکٹینگ سیکھنی شروع کردی۔

سال 2009 میں پائل کی تیلگو فلم پرینم ریلیز ہوئی۔ اسکے بعد سال 2010 میں انکی کنڑ فلم ورشادھرے، سال 2011 میں تیلگو فلم آوسراویلی اور سال 2011 میں تیلگو فلم مسٹر راسکل ریلیز ہوئی لیکن انہیں کوئی خاص پہچان نہیں ملی۔

پائل انسٹاگرام پر کافی ایکٹیو رہتی ہے۔ پائل آئے دن اپنی لٹیسٹ تصویریں انسٹاگرام پر شیئر کرتی رہتی ہے۔ پائل کے شیئر کرتے ہی انکی تصویر سوشل میڈیا پر وائرل ہونے لگتی ہے۔

Tags:

You Might also Like