Type to search

اسپورٹس

یہ جواب دیا ٹم پین نے کھلاڑیوں کی تنخواہوں میں کٹوتی کو لیکر

میلبورن،27اپریل (پی ٹی آئی) ٹیسٹ کپتان ٹم پین نے کہا ہے کہ اگر تنخواہوں میں کٹوتی کے بارے میں پوچھا گیا تو آسٹریلیائی کھلاڑی ‘لالچ’ نہیں دکھائیں گے کیونکہ یہ ضروری ہے کہ کوویڈ 19 میں وبا پھیلنے کے باوجود مستقبل میں کھیل میں اچھی ترقی ہوگی۔ کورونا وائرس کے بڑھتے پھیلاؤ کی وجہ سے ہندوستان کے آسٹریلیا دورے اور ٹی ٹونٹی ورلڈ کپ پر سوالیہ نشان لگ گیا ہے۔ کرکٹ آسٹریلیا پہلے ہی اپنے 80 فیصد عملے کی چھٹی کرچکی ہے اور اب کھلاڑیوں کے تنخواہ میں ممکنہ کٹوتی کو لیکر آسٹریلیا کرکٹرس ایسوسی ایشن (اے سی اے) سے بات چیت کررہا ہے۔
ٹم پین نے اے بی سی ریڈیو سے کہا یہ ضروری ہے کہ کھلاڑیوں کو کھیل کی حقیقی مالی صورتحال کا پتہ چلے اور کھلاڑی لالچ نہیں دیکھانے والے، انہوں نے کہا، ہماری روزی روٹی ، کرکٹ آسٹریلیا اور کھلاڑی ایسوسی ایشن سے جڑے سبھی لوگوں کی روزی روٹی اس پر منحصر کرتی ہے کہ کرکٹ کا کھیل پھلتا پھولتا رہے۔ پین نے کہا ، اس لیے اگر سبھی تنخواہ میں کٹوتی ممکن ہے اور اس سے مستقبل میں ہمارے کھیل کو فائدہ ہوتا ہے تو یقینی طور پر ہم اس پر غور کریں گے۔