Type to search

قومی

’ون نیشن ون راشن کارڈ‘ اسکیم میں جڑا اڑیسہ

نئی دہلی،1جون(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) ایک ہی راشن کارڈ سے پورے ملک میں سرکاری راشن فروخت کی طرف میں کل ایک اور قدم بڑھ جائے گا- کل سے ون راشن کارڈ اسکیم میں تین اور ریاست جڑ جائیں گے- ان میں اڑیسہ ، سکم اور میزورم شامل ہے- اسکے ساتھ ہی ان ریاستوں کی تعداد 20 ہوجائے گی جہاں یہ اسکیم لاگو ہوچکی ہے- وہیں 1 اگسٹ سے اس اسکیم میں تین اور ریاست بھی جڑ جائیں گے، اتراکھنڈ اور منی پور وہ ریاست ہے، ان ریاستوں کے جڑنے کے بعد ان ریاستوں اور مرکزی زیر انتظام ریاستوں کی کل تعداد 23 ہوجائے گی جہاں یہ اسکیم لاگو ہے-، بہار، یوپی، مہاراشٹرا اور گجرات جیسے ریاست پہلے ہی اسکیم سے جڑ چکے ہیں-

فوڈ سپلائی اور صارفین امور کے وزیر رام ولاس پاسوان نے ٹوئٹ کرکے یہ اطلاع دی۔ ان تینوں ریاستوں کے ساتھ ہی اب تک 20 ریاست اس منصوبہ میں شامل ہو چکے ہیں۔

اس منصوبہ کے تحت یکم اگست تک اتراکھنڈ، ناگالینڈ اور منی پور کو شامل کرنے کے لئے ضروری اقدامات کئے جا رہے ہیں۔ اگلے سال 31 مارچ تک اس منصوبہ کو پورے ملک میں نافذ کیا جانا ہے۔

ملک کے شہری اپنے حصے کا راشن ملک کے کسی حصے میں لے سکیں، اس کے لئے ون نیشن ون راشن کارڈ اسکیم نافذ کی گئی ہے۔ یہ منصوبہ اب تک آندھرا پردیش، گوا، گجرات، ہریانہ، جھارکھنڈ، کرناٹک، کیرالہ، مدھیہ پردیش، مہاراشٹر، راجستھان، تلنگانہ، تری پورہ، بہار، اتر پردیش، پنجاب، ہماچل پردیش، دمن دیووغیرہ میں لاگو کیا جا چکا ہے۔