Type to search

تعلیم اور ملازمت

مانو سی ٹی ای‘ سری نگر کے غیر مقامی طلبا کی عنقریب وطن واپسی

MANUU Admissions Translation

حیدرآباد 29 مئی (پریس نوٹ) مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی ‘ کالج آف ٹیچر ایجوکیشن ‘ سری نگر کے غیر مقامی طلبہ کو بہت جلد ان کے وطن بہار واپس بھیجنے کے انتظامات قطعی مراحل میں ہےں۔ ڈاکٹر طارق مسعودی‘ انچارج پرنسپال کے بموجب یونیورسٹی انتظامیہ نے انہیں ان غیر مقامی طلبہ کی واپسی کے انتظامات کے لیے کوآرڈینٹر مقرر کیا ہے اور انہوں نے ایک 5رکنی کمیٹی بھی تشکیل دی ہے۔

انچارج پرنسپال نے12 مئی کو حکومتِ کشمیر کے نوڈل آفیسر برائے کوڈ 19 انتظامیہ ‘ سری نگر ڈاکٹر طاہر محی الدین (کے اے ایس) کو بہار واپسی کے خواہشمند طلبہ کی فہرست درکار دستاویزات کے ساتھ پیش کردی جسے انہوں نے ڈویشنل کمشنر‘ کشمیر کے پاس بھیج دیا۔ ڈویشنل کمشنر نے اس معاملے میں مکمل تعاون اور طلبہ کو عنقریب ان کے وطن واپس بھیجنے کی طمانیت دی ہے۔

ڈاکٹر طارق مسعودی کے مطابق کشمیر کے نوڈل آفیسر نے طلبا کی بہار واپسی کے لیے بہار کے نوڈل آفیسر سے ربط قائم کرلیا ہے اور ان طلبا کو بہت جلد ان کے وطن واپس بھیج دیا جائے گا۔ ڈاکٹر طارق مسعودی نے وضاحت کی کہ کشمیر سے تاحال کسی کو بھی ہندوستان کے دیگر مقامات پر واپسی کی اجازت نہیں دی گئی ہے اسی لیے مانو کے طلبہ کو واپسی کے لیے انتظار کرنا پڑا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ کالج آف ٹیچر ایجوکیشن میں جملہ 46 غیر مقامی طلبہ زیر تعلیم ہے ۔ ان میں سے 34 واپسی کے خواہاں ہےں۔ 12طلبہ نے سری نگر میں قیام کو ترجیح دی ہے۔ انہوں نے اس سارے معاملے میں یونیورسٹی انتظامیہ بالخصوص پروفیسر ایوب خان‘ انچارج وائس چانسلر اور پروفیسر ایس ایم رحمت اللہ‘ رجسٹرار انچارج کی رہنمائی اور مستعدی کا شکریہ ادا کیا۔

Tags:

You Might also Like