Type to search

قومی

رسوئی گیس کی کوئی کمی نہیں ہے، 15 دنوں سے پہلے بکنگ نہیں کراسکیں گے: انڈین آئیل

بزنس ڈسک،29مارچ(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کورونا وائرس کی وجہ سے کچھ لوگ کھانے پینے کی چیزیں گھر میں ذخیرہ کررہے ہیں ، جس لیکر خود وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا ہے کہ اس کی کوئی ضرورت نہیں ، کھانے پینے کی چیزیں ملتی رہیں گی۔ لیکن اب خبر ہے کہ کھانے پینے کی چیزوں کے ساتھ ساتھ لوگ پیٹرول اور ڈیزل اور رسوئی گیس کی سلنڈر گھر میں جمع کررہے ہیں۔

آئی او سی کے چیئرمین سنجیو سنگھ نے کہا کہ ملک میں پیٹرول ، ڈیزل اور ایل پی جی کے کافی ذخیرہ ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہندوستان میں کوئی ایندھن بحران نہیں ہے۔ لاک ڈاؤن کی مدت سے ذیادہ کے اسٹاک ہے۔ اس لیے گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے۔

ملک کی سب سے بڑی تیل کمپنی انڈین آئل کارپوریشن نے کرونا وائرس کے پیش نظر لوگوں سے ’پینک بکنگ‘ نہیں کرانے کی اپیل کی ہے اورکہا ہے کہ اب 15 دنوں کے فرق پر ہی رسوئی گیس کی بکنگ کرائی جاسکتی ہے۔
انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کی وجہ سے پیٹرول اور ڈیزل کے پمپ بند نہیں ہے اور رسوئی گیس کی سپلائی بھی کی جارہی ہے ۔ لاک ڈاؤن کے دوران رسوئی گیس کی کوئی قلت نہیں ہے۔ اس لیے لوگ ضرورت سے ذیادہ کی بکینگ نہ کریں۔

Tags:

You Might also Like