Type to search

قومی

آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کے صدر بنے مولانا خالد سیف اللہ رحمانی

مولانا خالد سیف اللہ رحمانی

اندو، 3 جون (ذرائع) آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کو اپنا نیا صدر مل گیا ہے۔ مدھیہ پردیش کے اندور میں دو روزہ اجلاس کے بعد مولانا خالد سیف اللہ رحمانی کو بورڈ کا نیا چیئرمین بنایا گیا۔

 

 

بتادیں کہ اس سے قبل مولانا ربیع حسنی ندوی بورڈ کے چیئرمین تھے، جن کا طویل علالت کے بعد 13 اپریل 2023 کو انتقال ہوگیا تھا۔ اس کے بعد سے بورڈ کے چیئرمین کی کرسی خالی تھی۔ اب اے آئی ایم پی ایل بی کے اراکین نے متفقہ طور پر مولانا خالد سیف اللہ رحمانی کو نیا صدر منتخب کیا ہے۔

 

 

مولانا خالد سیف اللہ رحمانی آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کے بانی ارکان میں سے ایک ہیں۔ وہ اس سے قبل بورڈ کے جنرل سکریٹری کے طور پر کام کر رہے تھے۔

 

 

 

انہیں اپریل 2021 میں سابق جنرل سیکرٹری مولانا ولی رحمانی کی وفات کے بعد قائم مقام جنرل سیکرٹری مقرر کیا گیا تھا۔ اس کے بعد نومبر 2021 میں ہی کانپور کے جلسہ عام میں انہیں مستقل جنرل سکریٹری بنایا گیا۔

 

 

 

مولانا خالد سیف اللہ رحمانی آل انڈیا مسلم پرسنل لا بورڈ کے پانچویں صدر ہیں۔ یہ بورڈ 1973 میں قائم ہوا اور اس کے پہلے چیئرمین مولانا محمد طیب تھے۔ علی میاں دوسرے صدر اور مولانا قاضی مجاہد الاسلام قاسمی تیسرے صدر منتخب ہوئے۔

 

 

 

مولانا ربیع حسنی ندوی اے آئی ایم پی ایل بی کے چوتھے صدر رہے۔ وہ جون 2002 سے مسلسل 21 سال تک مسلم پرسنل لاء بورڈ کے صدر رہے۔ ان کا انتقال 13 اپریل 2023 کو ہوا جس کے بعد اب مولانا خالد سیف اللہ رحمانی کو یہ ذمہ داری ملی۔