Type to search

ٹی وی اور فلم

ماندانا کریمی کا ٹاپ لیس اور کسینگ سین پر بیان

ماندانا کریمی

فلمی ڈسک،27اپریل (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) فلمی دنیا کی بولڈ اداکارہ ماندانا کریمی ہمیشہ اپنی سینسیشنل فوٹوز سے انٹرینٹ کی دنیا میں آگ لگا دیتی ہے۔

حال ہی میں ایرانی ماڈل اور اداکارہ نے بالی ووڈ لائف کے ساتھ راست بات چیت کی ہے۔

اس بات چیت میں اداکارہ نے اپنے خاندان کے خلاف جاکر ایران سے ممبئی میں انٹری کرنے تک کے سفر کے بارے میں کھل کر بات کی ہے۔

اسکے علاوہ یہاں آنے پر فلمی دنیا میں کیریئر بنانا، شرمیلی لڑکی سے بنداس بننا، شوہر سے طلاق، اور اپنی بولڈ رویے کے بارے میں بتایا ہے۔

اداکارہ نے بتایا کہ کیسے ممبئی جیسے شہر میں اپنی بولڈنیس کے ساتھ وہ جیتی ہے۔

اور ان لوگوں کے بارے میں کیا سوچتی ہے جو انہیں بولڈ فوٹو سییشن یا کیسنگ سین پر ٹرول کرتے ہیں۔

اس انٹرویو کے دوران ماندانا کریمی نے کہا ، یہ وہ پروفیشن ہے جس میں آنا چاہتی تھی۔

جسے میں پیار کرتی ہوں اور پوری زندگی اس کام کو میں کرتی رہوں گی، اگر میرا کردار گلیمرس ہے۔

بکنی پہننا ہے یا کچھ بولڈ سین کی ضرورت ہے، تو میں ضرور کرونگی۔ کیونکہ یہ میرا کام ہے۔

میں کبھی بھی میرے سیٹ پر دوسروں کو غیر آرام دہ نہیں کرسکتی۔

ایسے میں آپ کو خود کو چھوڑ دینا پڑتا ہے۔ آپ ہمیشہ 24 گھنٹے جج کیے جاؤگے،

وہ کہیں گے کہ وہ موٹی ہے، بہت پتلی ہے، بہت یہ ہے، بہت وہ ہے، ڈانس نہیں کرسکتی، ہندی نہیں بول سکتی،

تو ٹھیک ہے، آپ ایسی انڈسٹری میں ہے جہاں ہر کوئی ہر شخص آپ کو جج کرئے گا۔

اور آپ کو اسکے لیے تیار رہنا ہوگا۔

کیا کول ہیں ہم، اسٹار اور بگ باس کی مشہور اداکارہ نے اسکے آگے کہا ،

ایسا شاید وہ اس لیے کرتے ہیں کیونکہ یہ انکے لیے عام نہیں ہے۔

لیکن شاید میرے لیے صورتحال ذیادہ اچھی ہے۔ یہ میرا کام ہے اور مجھے بہت پسند ہے۔

مجھے یہ کام کرنے میں مزہ آتا ہے۔ لیکن وہ کہیں گے کہ ہے بھگوان ، یہ انسٹاگرام پر ٹاپ لیس فوٹو کیسے ڈال سکتی ہے،

ہے بھگوان وہ کسینگ سین کیسے کرسکتی ہے یا بکنی کیسے پہن سکتی ہے۔

لیکن یہ ہمارے کام کا حصہ ہے۔ میں اسے مثبت لیتی ہوں۔

میں صرف جو مجھے پیار ملتا ہے اس پر نظر رکھتی ہوں اور بری باتوں کو نظرانداز کرتی ہوں۔

بتادیں کہ اداکارہ جلد ہی ایک بالی ووڈ فلم میں دیکھنے والی ہے۔

جہاں اداکارہ ایک ہراسانی کے شکار خاتون کا کردار نبھانے والی ہے۔

اسکے علاوہ ماندانا ایک ویب سیریز میں نظر آنے والی ہے۔

Tags:

You Might also Like