Type to search

وائرل

لائیو رپورٹنگ کے وقت خاتون رپورٹر کیا بوسہ، بعد میں منچلے شخص نے مانگی معافی

امریکہ ،30ستمبر(اردو پوسٹ ڈاٹ کام) امریکہ کے شہر لوئیس ول میں ایسا واقع ہوا، جس نے ہر کسی کو حیران کردیا۔ لائیو رپورٹنگ کر رہی ’ویو 3‘ نیوز چینل کی خاتون رپورٹر کو ایک شخص نے کس کردیا۔ اس حرکت کے بعد خاتون رپورٹر گبھرا گئی۔ اینکر نےاسکو سنبھالا اور کسی بھی طرح بولیٹین کو کامیاب طریقے سے آن ائیر کیا گیا۔ اسکے بعد خاتون رپورٹر نے کس کرنے والے شخص کی پہچان کی اور جنسی ہراسانی کا معاملہ دجر کرایا۔ خاتون رپورٹر نے ٹیوٹر پر اس واقع کا ویڈیو بھی شیئر کیا۔

 

 

 

رپورٹر کا نام سارہ ریوسٹ ہے۔ انہوں نے ٹیوٹر پر واقع کی مذمت کرتے ہوئے لکھا۔ 3 سکنڈ کا فیم مل گیا آپکو ۔ کیا ہوتا اگر آپ مجھے ٹچ ہی نہیں کرتے۔ شکریہ۔ ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ شخص ہنستے ہوئے کیمرے کے سامنے آتا ہے اور سارہ کو کس کردیتا ہے۔ سارہ پلٹ کر کہتی ہے ’یہ ٹھیک نہیں ہے۔‘۔۔۔

رپورٹر کو ٹچ اور کس کرنے والے شخص کا نام ایرک گڈمین ہے۔ جب اسکا چہرہ دنیا کے سامنے آیا تو اس نے رپورٹر کو معافی نامہ بھیجا۔ لیکن اس سے پہلے سارہ جنسی ہراسانی کا معاملہ درج کرا چکی تھی۔ انہوں نے دوسرا ٹیوٹ کرتے ہوئے لکھا۔ جس شخص نے مجھے چھوا اور کس کیا، اس کا نام ایرک گڈمین ہے۔ اس پر جنسی ہراسانی کا معاملہ درج کرایا گیا ہے۔ 26 ستمبر اس نے معافی نامہ لکھا۔ میں اسے چینل میں پڑھونگی۔

 

معافی نامہ میں ایرک نے لکھا۔ جہاں آپ رپورٹینگ کررہی تھی۔ اس وقت میں وہیں سے بیچلر پارٹی کرکے نکلا تھا۔ میں نے اس وقت مزے کے لیے ایسا کیا۔ لیکن یہ بالکل ٹھیک نہیں تھا۔ ویڈیو دیکھنے کے بعد اور آپ کا تبصرہ پڑھنے کے بعد مجھے غلط لگتا ہے کہ رپورٹنگ کی جاب کافی مشکل ہوتی ہے۔ میں نے بیچ جاب میں آپ کو پریشان کیا۔ اس کے لیے میں دل سے معافی مانگتاہوں۔

ویو 3 کی خبر کے مطابق معافی نامہ کے بعد سارہ نے ایرک کو معاف کردیا ہے۔ سارہ کو اس بات کی خوش ہے کہ شخص کو غلطی کا احساس ہوا۔