Type to search

ٹی وی اور فلم

مہیما چودھری برتھ ڈے اسپیشل: کامیاب فلمیں دینے کے بعد انڈسٹری سے دور

مہیما چودھری

فلمی ڈسک،13ستمبر (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) بالی ووڈ کی خوبصورت اداکارہ مہیما چودھری آج اپنی سالگرہ منا رہی ہے- وہ اب لمبے وقت سے فلمی پردے سے دور ہے- مہیما نے بالی ووڈ کے کئی شاندار فنکاروں کے ساتھ کام کیا ہے اور خوب سرخیاں بٹوری تھی-

مہیما چودھری کی پیدائش 13 ستمبر 1973 کو دارجیلنگ میں ہوئی- وہ ایک اداکارہ اور ماڈل ہے جو بالی ووڈ کی فلموں میں نظر آئی- مہیما چودھری کا پیدائشی نام ریتو چودھری ہے-

انہوں نے دسویں کلاس تک ڈاؤن ہل کرسنگ میں تعلیم حاصل کی اور بعد میں دارجیلنگ کے لوریٹو کالج میں چلی گئیں۔
وہ کئی ٹی وی اشتہاروں میں نظر آئیں، جن میں سے سب سے مشہور پیپسی ہے جس میں وہ عامر خان اور ایشوریا رائے کے ساتھ تھیں۔

 لیکن فلمی دنیا میں لوگ انہیں مہیما چودھری کے نام سے جانتے ہیں- سال 1990 میں انہوں نے پڑھائی چھوڑ کر ماڈلنگ کی دنیا میں اپنا کیریئر بنانا شروع کیا- انہوں نے اپنے ماڈلنگ کیریئر کے دوران کئی اشتہارات میں بھی کام کیا-

وہ میوزک چینلز میں وی جے تھی، جہاں انہیں سبھاش گھئی نے نوٹس کیا، سبھاش گھئی نے انھیں 1997 میں ریلیز ہوئی فلم پردیس میں بریک دیا- فلم کامیاب رہی اور بہترین اداکاری کے لیے فلم فیئر ایوارڈ بارئے ڈیبیو جیتا-

وہ 90 کے دہائی میں اپنی خوبصورت مسکان سے لوگوں کا دل جیتنے والی اداکارہ مہیما چودھری آج فلمی پردے سے غائب ہے۔ اپنی نجی زندگی میں مصروف مہیما چودھری پوری طرح سے بدل چکی ہے۔ اب وہ ویسی نہیں دیکھتی ہے، جیسی فلموں میں نظر آتی تھی۔

اداکارہ مہیما چودھری نے فلم پردیس سے بالی ووڈ میں قدم رکھا تھا۔ اس فلم کی ہدایت سبھاش گھائی نے کی تھی۔ اور اس میں شاہ رخ خان لیڈ رول میں تھے۔ فلم پردیس باکس آفس پر بہت ہٹ رہی، اس فلم نے مہیما چودھری کی مقبولیت کو ملک بھر میں پہنچا دیا۔

فلم پردیس سے مہیما چودھری نے کامیابی کی سیڑھی پر تھی کہ انکی کار کی ٹکر ہوگئی۔ اس ٹکر کے دوران انکا چہرہ زخمی ہوگیا تھا۔ حادثے میں مہیما چودھری کا چہرہ پوری طرح بگڑ گیا تھا۔ جب انہیں ہوش آیا تب شیشہ دیکھ کر وہ ڈر گئی۔

اداکارہ مہیما نے اپنے چہرے کی سرجری کرائی، مہیما نے ایک انٹرویو کے دوران بتایا تھا کہ ڈاکٹرس نے سرجری کے دوران انکے چہرے سے 68 کانچ کے ٹکڑے نکالے تھے۔ سرجری کے بعد ڈاکٹرس نے انہیں دھوپ میں نکلنے سے منع کردیا تھا۔ اس دوران وہ گھر پر ہی رہی اور انہوں نے بالی ووڈ فرینڈس کو اس بارے میں کوئی معلومات نہیں دی تھی۔

مہیما چودھری کو ٹھیک ہونے میں لمبا وقت لگا اور اتنے وقت میں انکا بالی ووڈ کیریئر ختم ہوگیا۔ حالانکہ آج وہ صحت مند ہے اور اپنے خاندان کے ساتھ رہتی ہے۔

مہیما چودھری کی شادی بزنسمین بابی مکھرجی سے ہوئی تھی لیکن انکی شادی ذیادہ لمبی نہیں چل سکی- اداکارہ اور بابی مکھرجی ایک دوسرے سے الگ ہوگئے- انکی ایک آٹھ سال کی بیٹی بھی ہے-

مہیما نے کئی فلمموں میں کام کیا جن میں پردیس، دل کیا کرے، داغ -دی فائر، پیار کوئی کھیل نہیں، دھڑکن، دیوانے، کروکشیترا، کھلاڑی 420، لججا، یہ تیرا گھر یہ میرا گھر، اوم جے جگدیش، دل ہے تمہارا، سایا، تیرے نام، باغبان، ایل او سی کارگل،دوبارہ، ضمیر، کچھ کھٹا کچھ میٹھا، سہر، فلم اسٹار، ہوم ڈیلیوری، سینڈویچ، کڑیوں کا ہے زمانہ، گمنام، ڈارک چاکلیٹ، جیسے فلمیں شامل ہے-

فلم پردیس کے لیے انہیں فلم فیئر اور زی سینے کا بہترین فیمیل ڈیبیو ایوارڈ مل-
فلم دھڑکن کے لیے انہیں سنسوئی ایوارڈ کا بہترین سپورٹنگ اداکارہ کا ایوارڈ ملا-
فلم دل کیا کرے کے لیے انہیں فلم فیئر کا بہترین سپورٹنگ اداکارہ کا ایوارڈ ملا-

اس کے علاوہ انہی فلموں کے لیے وہ کئی زمروں میں نامزد ہوئی-

Tags:

You Might also Like