Type to search

وائرل

ڈاکٹر کی غیر حاضری میں ذہنی مریضی شخص نے مریضوں کا کیا علاج

مدھیہ پردیش،22فروری(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) مدھیہ پردیش کے چھتپور سے ایک حیران کرنے والی خبر سامنےآئی ہے۔جہاں ایک ذہنی طور پربیمار شخص نے صرف ڈاکٹر کی کرسی پر بیٹھ گیا بلکہ مریضوں کا چیک اپ بھی کیا۔ اتنا ہی نہیں اس نے ان مریضوں کو باقاعدہ دوا بھی لکھ کردی۔

واقع چھتپور کے ضلع ہاسپٹل کا ہے، جہاںڈاکٹر ہمانشو کا چمبر خالی دیکھ ایک ذہنی مریض وہاں پہنچ گیا اور ڈاکٹر کی خالی کرسی پر بیٹھ گیا۔ مریض بھی اس بزرگ شخص کو ڈاکٹر سمجھ بیٹھے اور اپنی مسائل بتانے لگے۔ اس شخص نے بھی کسی کو مایوس نہیں کیا اور مریضوں کو چیک اپ کر کے دوائیں لکھتا رہا۔

زبردست انگریزی بول رہا تھا فرضی ڈاکٹر (ذہنی مریض)

مریض جب لال پین سے لکھیے پرچی کو لیکر بڑی تعداد میں ہاسپٹل کے میڈیکل اسٹور پر پہنچے تو اسٹاف کو شک ہوا۔ اسٹاف نے ڈاکٹر کے چیمبر میں جاکر دیکھا تو اس معاملے کا خلاصہ ہوا۔ اسکے بعد اسے چیمبر سے باہر نکالا گیا۔ مریض کا کہنا ہے کہ اتنی زبردست انگریزی بول رہا تھا کہ کسی کو شک ہی نہیں ہوا۔

خود کو ایمس کا ڈاکٹر بتا رہا تھا۔

ملی معلومات کے مطابق ذہنی مریض نے قریب آدھا درجن مریضوں کو دوائیں لکھی۔ ایک مریض نے کہا، اس نے مجھے بالکل ڈاکٹر کی طرح چیک اپ کیا اور کچھ دوائیں لکھی۔ سیول سرجن ڈاکٹر ترپھاٹی نے کہا، اسکا نام کوئی جانتا، وہ خود کو ایمس کا ڈاکٹر بتا رہا تھا، اسے چیمبر سے باہر نکالے جانے کے بعد میں نے اس سے بات کی تو احساس ہوا کہ اسے نفسیاتی ماہر کی ضرورت ہے۔ اس معاملے کی جانچ کے احکام دے دیئے گئے ہیں۔