Type to search

تلنگانہ

حیدرآباد عصمت ریزی واقع کے چاروں ملزمین پولیس انکاؤنٹر میں ہلاک

حیدرآباد ،6ڈسمبر(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام)حیدرآباد عصمت ریزی کے چاروں ملزمان کو پولیس نے  انکاؤنٹر میں مار گرایا ہے۔ انکاؤنٹر نیشنل ہائی وے 44 کے پاس جمعرات دیر رات ہوا۔ پولیس ملزمان کو این ایچ 44 پر کرائم سین بازیافت کرنے کے یے لیکر گئی تھی۔ پولیس کے مطابق چاروں ملزمان نے موقع سے بھگانے کی کوشش کی۔ پولیس نے چاروں ملزمان کو ڈھیر کردیا۔

بتادیں کہ 28-27 نومبر کی رات کو حیدرآباد میں خاتون ڈاکٹر کے ساتھ حیوانیت کی واقع کو انجام دیا گیا تھا۔ خاتون ڈاکٹر کا جلی ہوئی لاش بنگلور حیدرآباد قومی شاہراہ پر انڈر پاس کے قریب ملی تھی۔

پولیس حراست میں تھے ملزمین

پولیس نے اس معاملے میں چار ملزمین کو گرفتار کر لیا تھا۔ پولیس نے ملزمان کو کورٹ مں پیش کیا تھا، جہاں انہیں 14 دن کی عدالتی حراست میں بھیج دیا گیا۔  جس کے بعد حیدرآباد پولیس کی مانگ کی تو ملزمان کے 7 دن کی پولیس تحول میں بھیج دیا گیا تھا۔ پولیس ملزمان کو سین کریٹ کرانے کے لیے لیکر گئی تھی۔ اس دوران  پولیس انکاؤنٹر میں ملزمین مارے گئے۔

Hyderabad: Heavy police presence at the spot where accused in the rape and murder of the woman veterinarian were killed in an encounter earlier today. #Telangana pic.twitter.com/tpIzyBgxdZ

— ANI (@ANI) December 6, 2019

خاتون ڈاکٹر کے ساتھ حیوانیت کی تھی

خاتون ڈاکٹر کی اسکوٹی پنچکر ہوگئی تھی۔ جب وہ اسکوٹی پارک کررہی تھی۔ تبھی چاروں نے اس واقع کو انجام دیا تھا۔ اسکے بعد چاروں ملزمان نے ڈاکٹر کےساتھ عصمت ریزی کی اور گلا دبا کر قتل کردیا تھا۔ اسکےبعد متاثرہ کی لاش کو جلا دیا گیا تھا۔