Type to search

صحت

گردن کے درد کا علاج : فوری طور پر ٹھیک کرنے کے لیے موثر گھریلو علاج

گردن کا درد

گردن کے درد سے کیسے چھٹکارا حاصل کریں:

آفس میں کام کرنے والے حضرات اور گھریلوں خواتین گردن کے درد سے متاثر


ہیلتھ ڈسک، (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) گردن کا درد، جسے سرویکلجیا بھی کہا جاتا ہے، یہ ایک عام مسئلہ ہے،  مسلسل کمپیوٹر کے سامنے بیٹھنا، غلط کرسی پر بیٹھنا، گردن میں درد کا باعث بنتا ہے۔ ذیادہ تر آبادی کا حصہ گردن سے پریشان ہے۔ یہ درد آپ کے اوپری جسم میں پھیل سکتا ہے، آپ کے کندھوں، بازوؤں کو متاثر کر سکتا ہے۔

 

 

 

گردن کے درد سے صرف آفس میں کام کرنے والے حضرات ہی نہیں بلکہ گھریلوں خواتین بھی اس درد سے دوچار ہیں۔ خواتین کے گردن میں درد کی وجہ کچن میں مسلسل کھانا پکاتے وقت نیچے کی طرف دیکھنا، وغیرہ شامل ہے۔

اکڑی ہوئی گردن کے ساتھ بیدار ہونا دردناک ہوتا ہے، یہ ہم سبھی جانتے ہیں، تیز دد سے سر کو زرا سا بھی ہلانا تقریبا ناممکن ہوجاتا ہے- گردن کے درد کے ساتھ ایک دن بھی گذارنا بہت پریشان کن ہوتا ہے-

 

 

 

اکڑی ہوئی گردن دردناک ہو سکتی ہے اور آپ کی روزمرہ کے کاموں میں تکلیف دہ ثابت ہوسکتی ہے۔ آپ کی گردن کے درد کی وجہ سے اچھی نیند پانا مشکل ہوتا ہے۔ اکثر گردن کا درد عارضی ہوتا ہے، لیکن اگر مناسب علاج نہ تو گردن کے درد دائمی شکل بھی اختیار کر سکتا ہے۔

کئی بار گردن میں درد کے ساتھ اکڑن، سردرد ، اکڑن اور کھانے میں مشکل بھی ہوسکتی ہے- ذیادہ تر وقت درد یا تو خراب جسمانی پوزیشن ، تناؤ ، خراب فزیکل پوزیشن کی وجہ سے ہوتی ہے-

انسان کی گردن اور کمر چھوٹے چھوٹے مہروں سے جڑ کر بنی ہے جو کہ ریڑھ کی ہڈی کی شکل میں نظر آتی ہے- گردن میں درد کے کئی اسباب ہو سکتے ہیں-

یہاں گھر پر خوفناک گردن کے درد سے راحت پانے کے کچھ آسان طریقے ہیں-

 

 

 

اپنی گردن کو آہستہ سے اسٹریچ کریں
اگر آپ گردن میں تیز درد کے ساتھ اٹھتے ہیں، تو سب سے پہلے آپ کو جو کرنا ہے، وہ ہے تھوڑا سا اسٹریچ کرنا- اپنے سر کو دھیرے سے ہلانے سے کسی خاص حصے میں خون فلو بڑھ جائے گا اور سوجن کم ہوجائے گی-
آپ اپنے سر کو ایک طرف سے دوسری طرف لو جاسکتے ہیں یا کچھ بار دھیرے دھیرے سر ہلا سکتے ہیں جیسے کہ آپ “ہاں” کہے رہے ہیں-

گردن کا درد ایک عام مسئلہ ہے، جسے سرویکلجیا بھی کہا جاتا ہے تقریبا عام لوگوں میں گردن میں درد اور اکڑن ہوتی ہے- یہ آپ کے اوپری جسم میں پھیل سکتا ہے، آپ کے کندھوں، بازوؤں اور سینے کو متاثر کر سکتا ہے-
زیادہ دیر تک غلط پوزیشن میں کرسی پر بیٹھنا اور کمپیوٹر اسکرین پر جھک کر دیکھنا اسکا باعث بن سکتا ہے-
گرم یا ٹھنڈا سیک لگائے

 

گردن کی اکڑن سے جلد راحت پانے کے لیے گرم یا ٹھنڈا سیک بھی آپکی مدد کرسکتا ہے- کمپریشن آپ کے پٹھوں کو آرام دیتا ہے اور گردن میں بلڈ فلو کو بڑھاتا ہے- یہ درد کو کم کرنے میں بھی مدد کرئے گا- ایک بار میں 10 منٹ کے لیے گرم یا ٹھنڈا سیک لگائے- ایسا دن میں کم سے کم تین سے دو بار کریں-
گرم شاور لیں

گردن کی اکڑن سے چھٹکارا پانے کے لیے یپسوم نمک کے ساتھ گرم پانی سے بہتر کچھ نہیں ہے- یہ گرم پانی کسے پانی نہانے سے تنگ پٹھوں کو آرام اور سکون ملتا ہے- جبکہ نمک سوجن کو کم کرنے اور خون کے بہاؤ میں بہتر کرنے میں مدد کرتا ہے-

 

 

تیل سے مالش کریں
آپ فوری آرام کے لیے تیل سے اپنی گردن کی ہلکے سے مالش کر سکتے ہیں۔ پیپرمنٹ یا لیوینڈر کے تیل کے کچھ قطرے لیں اور اسے ناریل کے تیل میں ملا لیں- اس مکسچر سے اپنی گردن کی اچھی طرح مساج کریں-

 

 

سیب کا سرکہ
اکڑی گردن کے علاج کے لیے سیب کا سرکہ ایک بہتر گھریلو علاج ہے- اے سی وی میں موجود اینٹی آکسیڈنٹس اور اینٹی انفلمنٹری ایجنٹ تناؤ اور پٹھوں کے درد سے راحت دینے کے لیے جانے جاتے ہیں-

ایک رومال یا ٹشو کو تھوڑے سیب کے سرکے میں بگھائے اور اسے اپنی گردن پر رکھیں- ایک گھنٹے کے لیے رومال کو اسی حالت میں چھوڑ دیں- اسے دن میں کم سے کم دو بار دہرائیں-

 

 

تیل سے مالش کریں
آپ فوری آرام کے لیے تیل سے اپنی گردن کی ہلکے سے مالش کر سکتے ہیں۔ پیپرمنٹ یا لیوینڈر کے تیل کے کچھ قطرے لیں اور اسے ناریل کے تیل میں ملا لیں- اس مکسچر سے اپنی گردن کی اچھی طرح مساج کریں-

 

 

 

سیب کا سرکہ
اکڑی گردن کے علاج کے لیے سیب کا سرکہ ایک بہتر گھریلو علاج ہے- اے سی وی میں موجود اینٹی آکسیڈنٹس اور اینٹی انفلمنٹری ایجنٹ تناؤ اور پٹھوں کے درد سے راحت دینے کے لیے جانے جاتے ہیں-

ایک رومال یا ٹشو کو تھوڑے سیب کے سرکے میں بگھائے اور اسے اپنی گردن پر رکھیں- ایک گھنٹے کے لیے رومال کو اسی حالت میں چھوڑ دیں- اسے دن میں کم سے کم دو بار دہرائیں-

 

 

 

گردن کے درد سے راحت پانے کے دیگر ٹپس
اگر آپ اکثر گردن کے درد سے پریشان رہتے ہیں تو اپنے سونے کی پوزیشن بدل لیں- اپنی پیٹھ یا پیٹ کے بل لیٹنے کے بجائے اپنی طرف سونے کی کوشش کریں-
اگر اپنے کافی وقت سے ایسا نہیں کیا ہے تو اپنا تکیہ بدل لیں-
غلط پوزیشن بھی گردن میں درد کی وجہ بن سکتا ہے-
اس وقت توجہ رکھیں جب آپ اپنے لیپ ٹاپ اور اسمارٹ فون سے چپکے رہتے ہیں- یہ گردن کے درد کا ایک اہم وجہ بھی ہوسکتی ہے-

 

برف سے سے سیکے

گردن کا درد جو طویل عرصے سے لاحق نہ ہو۔ اس پر برف کو ایک پلاسٹِک کے بیگ میں ڈال کر 15 منٹ تک رکھیں۔ برف رگوں کو سکیڑ کر مخصوص جگہ پر خون کا بہاؤ کم کر دیتی ہے اس لئے یہ شدید درد اور سوجن میں انتہائی مؤثر ہے۔ مگر کبھی بھی برف کو براہ راست جلد پر نہیں رکھیں۔

ہلدی کا استعمال

گھر کے کچن میں موجود ہلدی ملا دودھ یا شہد اور ہلدی کی چائے جسم کے کسی بھی حصے سے درد کھینچنے کے لئے پی جاتی ہے۔ گردن میں اینٹھن بھی ہلدی کے استعمال سے دور کی جاسکتی ہے۔

 

 

کمپیوٹر پر بیٹھنے اٹھنے کے طریقے میں تبدیلی

گردن کے درد کی شکایت ذیادہ تر وقت تک کمپیوٹر استعمال کرنے اور غلط طریقے سے لیٹنے کی وجہ سے ہوتا ہے۔ جیسے ہی درد اٹھنے لگے فوراً اس کام کو روک دیں۔ دو تین دن تک آرام کریں اور اگر پھر بھی درد میں آرام نہ آئے تو ڈاکٹر سے رجوع ہوں۔

اس کے علاوہ بستر پر لیٹنے کا انداز تبدیل کریں۔ کمر اور کروٹ کے بل سونا بہترین ہوتا ہے۔ پیٹ کے بل سونے سے احتیاط کریں۔ حد سے ذیادہ موٹا تکیہ یا ایک سے ذیادہ تکیے استعمال نہ کریں۔


(نوٹ: صلاح سمیت یہ مضمون صرف عام معلومات فراہم کرتی ہے۔ یہ کسی بھی طرح سے طبی رائے کا متبادل نہیں ہے، مزید معلومات کے لئے ہمیشہ کسی ماہر یا اپنے ڈاکٹر سے رجوع کریں۔ اردو پوسٹ اس معلومات کے لیے ذمہ داری قبول نہیں کرتا ہے۔ )