Type to search

تلنگانہ

سابق وزیر اور ٹی آر ایس کے لیڈر محمد فرید الدین کا انتقال

محمد فرید الدین

حیدرآباد ، 29 ڈسمبر (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) متحدہ آندھراپردیش کے سابق وزیر محمد فرید الدین کا چہارشنبہ کو  انتقال ہوگیا ۔ 64 سالہ سابق لیڈر کچھ دن سے بیمار تھے۔ محمد فرید الدین کا آج ایشن انسٹی ٹیوٹ آف گیاسٹرو انٹرولوجی ( اے آئی جی) گچی باؤلی میں مغرب کے وقت انتقال کرگئے۔

وہ کچھ دنوں قبل ٹی آر ایس کے رکن کونسل کی حیثیت سے سبکدوش ہوگئے تھے۔ کانگریس دور میں وائی ایس راج شیکھر ریڈی کی کابینہ میں فرید الدین وزیر اقلیتی بہبود، وقف، حج، گورنمنٹ انٹرپرائزس و کارپورشن کے وزیر رہ  چکے ہیں۔ فرید الدین ایک غیر متنازعہ لیڈر تھے جو ظہیرآباد اسمبلی حلقہ میں اپنا اچھا خاصہ اثر ورسوخ رکھتے تھے۔

فرید الدین اپنی سیاسی زندگی کا آغاز سرپنج کی حیثیت سے کیا بعد ازاں ظہیر آباد بلاک سمیتی کے وائس چیرمین بھی رہے۔ کانگریس کے ٹکٹ پر پہلی مرتبہ اسمبلی حلقہ ظہیرآباد  سے اسمبلی کے لیے منتخب ہوئے۔

دو سال قبل انہیں مسٹر تملاناگیشور راؤ کی جگہ پر ایم ایل سی بنایا گیا جو گذشتہ ماہ تک ٹی آر ایس رکن قانون ساز کونسل کی حیثیت سے برقرار رہے جن کی عہدہ کی معیاد گذشتہ دو ماہ قبل ختم ہوئی تھی۔

ان کے انتقال پر وزیر اعلی چندر شیکھر راو سمیت متعدد سیاسی اور سماجی ہستیوں نے تعزیت اور رنج و غم کا اظہار کیا ہے ۔

تلنگانہ کے چیف منسٹر چندر شیکھر راؤ نے محمد فرید الدین کے انتقال پر غم کا اظہار کرتے اقلیتی رہنما اور عوام کے نمائندے کے طور پر ان کی خدمات کو یاد کیا۔ انہوں نے سابق ایم ایل سی فرید الدین کے لواحقین سے گہری ہمدردی کا بھی اظہار کیا ۔

انٹرنیٹ پر درج معلومات کے مطابق محمد فرید الدین کی پیدائش 14 اکتوبر 1957 کو ظہیرآباد میں ہوئی تھی۔ انکے والد محمد فخر الدین مرحوم ریٹائرڈ ہیڈ ماسٹر تھے، پسماندگان میں اہلیہ کے علاوہ ایک فرزند محمد تنویر الدین اور دو دختران شامل ہے۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *