Type to search

تلنگانہ

تلنگانہ میں اگلے 48گھنٹوں کے دوران زبردست بارش کا امکان

حیدرآباد19اکتوبر(ذرائع / اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) محکمہ موسمیات نے کہا ہے کہ اگلے 48 گھنٹوں کے دوران تلنگانہ کے چند مقامات پر شدید سے شدید ترین بارش کا امکان ہے۔

پیر کے روز بھی دوپہر کے بعد اچانک بارش شروع ہوگئی- جس سے حیدرآباد کی عوام میں کافی تشویش پیدا ہوگئی- کیونکہ کئی نشیبی علاقوں میں پانی اب بھی روکا ہوا ہے اگر مزید بارش ہوتی ہے تو حالات اور خراب ہونے کا ڈر ہے- حالانکہ پیر کی صبح سے آسمان صاف تھا لیکن دوپہر بعد موسم میں تبدیلی آگئی-

شدید بارش سے پرانے شہر کے فلک نما اور بابا نگر زیادہ متاثر ہوا- بابا نگر میں پچھلی بارش میں کئی مکانات پوری طرح خالی ہوگئے پانی نے سب بہا کر لے گیا–

وزیر بلدی نظم ونسق کے کے ٹی آر نے ہدایت دی ہے کہ آئندہ 3 تا 4 دنوں کے دوران شدید بارش کے امکان کے پیش نظر عہدیدار چوکس رہیں۔

محکمہ موسمیات کے بلیٹن میں انہوں نے کہا کہ آئندہ تین دنوں کے دوران شمالی ساحلی آندھرا، یانم میں بعض مقامات پر شدید بارش کا امکان ہے۔ 21,22,23 اکتوبر کو تلنگانہ میں بارش کا امکان ہے۔

بتادیں کہ حیدرآباد کے پرانا شہر کے پرانا پُل سے متصل پُل کے ایک پلیئر کو نقصان کو دکھتے ہوئے حکام نے اس پل کو ٹریفک کے لئے بند کردیا اور ٹریفک کا رخ دوسری طرف موڑ دیا گیا۔ ٹریفک پولیس نے فوری طورپر اس پل کے قریب بیریکیڈس لگادیئے

کے ٹی آر نے مئیر گریٹرحیدرآباد میونسپل کارپوریشن(جی ایچ ایم سی) بی رام موہن اور جی ایچ ایم سی کے دیگر اعلی عہدیداروں کے ساتھ جائزہ اجلاس منعقد کرتے ہوئے بارش متاثرین کے لئے جاری راحت کاموں کا جائزہ لیا اور صورتحال سے واقفیت حاصل کی۔

ریاستی حکومت کی جانب سے حیدرآباد میں ہوئے زبردست بارش سے ہوئے نقصانات کو دیکھتے ہوئے حکومت نے متاثرین میں غذائی کٹس کی تقسیم کیے۔ تقریبا 30ہزار سے زائد کٹس کی تقسیم کیے گئے۔ ان کٹس میں پانچ کیلوچاول، ایک کیلوتوردال،500ملی لیٹر تیل،200گرام مرچ پاوڈر،100گرام ہلدی،200گرام سانبرکا پاوڈر، ایک کیلو نمک،250گرام املی،ایک کیلوآٹا اور 100گرام پتی جیے اشیا شامل ہے۔

  بارش سے شہر کا پرانا پل کو نقصان پہنچا تو وہی فلک نما ریل اوور بریج میں سراغ ہوگیا- ٹولی چوکی کی ندیم کالونی میں بھی بارش کا پانی ٹہرا ہوا ہے کہ آہستہ آہستہ پانی کی سطح نیچے ہورہی ہے لیکن اگر دوبارہ بارش ہوتی ہے تو اس میں اضافہ کا خدشہ ہے،

بابا نگر میں بارش کی تباہی کے بعد مقامی اور دیگر علاقوں کے نوجوانوں آگے آکر متاثرہ لوگوں کی مدد کی- اور ہر ممکن مدد کررہے ہیں- حکومتی مدد اور بچاؤ مہم شروع ہونے سے پہلے ہی نوجوانوں نے لوگوں کی مدد کرنا شروع کردیا تھا-

Tags:

You Might also Like