Type to search

اسپورٹس

کورونا وائرس سے لڑنے کے لیے میدان پر اتری انگلینڈ کے کپتان ہیدر نائٹ ، بنی والینٹر

اسپورٹس ڈسک،لندن، 30مارچ(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) وبائی مرض کورونا وائرس سے دنیا کو نجات دلانے میں کھیل کا شعبہ اپنی طرف سے مدد کررہا ہے۔ ذیادہ تر کھلاڑیوں نے اس موقع پر بڑی رقم عطیہ کی ہے۔ جو کھلاڑی پولیس یا میڈیکل فیلڈ میں ہے وہ اپنی ڈیوٹی بخوبی نبھا رہے ہیں۔ لیکن کچھ کھلاڑی بطور والینٹر کی حیثیت سے میڈیکل فیلڈ سے جڑ رہے ہیں۔ تاکہ لوگوں کی مدد کی جاسکے۔ ایسے ہی کھلاڑیوں میں انگلینڈ کی خاتون کھلاڑی ٹیم کی کپتان ہیدر نائٹ شامل ہے۔

انگلینڈ کی خاتون کرکٹر ہیدر نائٹ کورونا وائرس سے لڑنے کے لیے ملک کی رضا کار کی حیثیت سے نیشنل ہیلتھ سرویس (این ایچ ایس) میں شامل ہوگئی ہے۔ نائٹ نے کہا کہ اب وہ دوا کو ایک مقام سے دوسرے مقام پر لے جانے اور انگلینڈ میں اس وبا کے بارے میں لوگوں میں بیداری لانے میں مدد کریں گی۔ برطانیہ میں قریب 20 ہزار لوگ کوویڈ 19 وائرس سے متاثر ہوچکے ہیں۔ ان میں پی ایم بورس جانسسن بھی شامل ہے۔

ہیدر نائٹ نے بی بی سی کے لیے اپنے کالم میں لکھا میں والینٹر کے طور پر این ایچ ایس سے جڑی ہوں، اس وقت میں کھیل نہیں رہی ہوں اور بالکل فری ہوں، میں جتنا ممکن ہواتنا مدد کرنا چاہتی ہوں، دنیا میں اب تک کوویڈ 19 نامی وائرس کی وجہ سے 23ہزار لوگوں کی جان جاچکی ہے۔

فوٹو بشکریہ آئی اے این ایس۔

Tags:

You Might also Like