Type to search

صحت

کیا کھانے کی جگہ سلاد کھانا ہے ٹھیک؟

ہیلتھ ڈسک،31اگسٹ(اردوپوسٹ) اگر آپ صحت کے لیے کافی ایکٹیو ہے تو کئی بار کھانے کے بجائے سلاد آرڈر کردیتے ہیں- لیکن کیا ایسا کرنا واقعی صحت مند ہے؟ جواب شاید نہ ہو، ایسا اس لیے کیونکہ باہر ملنے والے سلاد میں کچھ چیزیں ایک ساتھ ملا کر انہیں سلاد کا نام دیے دیا جاتا ہے لیکن یہ اتنے ہیلتھی نہیں ہوتے- لوگوں کو لگتا ہے کہ وہ تو ہیلتھی سلاد کھا رہے ہیں یہ انکی غلط فہمی ہے-

 

نیوٹریشن ماہرین سواتی کہتی ہے کہ سلاد اتنی ہیلتھی بھی نہیں ہوتی جتنا لوگ سمجھ لیتے ہیں- اس میں پرمحفوظ پھل (پرزورڈ فروٹس) کریمی ڈریسنگ اسکو اتنا ہیلتھی نہیں رہنے دیتے جتنا لوگ سمجھتے ہیں-

لوگ سلاد کو توجہ دیے رہے ہیں یہ اچھی بات ہے- ہلکی پکی یا کچی سبزیاں کھا کرہم اچھی طرح سمجھ سکتے ہیں کہ ہم کیا کھا رہے ہیں اور یہ ہماری صحت پر کیسے اثر ڈالیں گے- لیکن اسکے اصلی فارم کو چھوڑنا ٹھیک نہیں-

 

بتادی ں کہ ہیلتھ ماہرین سلاد کھانے پر زور اس لیے دیتے ہیں کیونکہ ان میں ہمیں مائیکرو نیوٹریشن اور فائبر ملتے ہیں- حالانکہ صرف سبزی والی سلاد کو کھانے سے ریپلس نہیں کرنا چاہیئے کیونکہ اس میں پروٹین نہیں ہوتا ہے- کئی لوگ اپنے مکمل کھانے کو صرف ویجیٹبل سلاد سے ریپلس کردیتے ہیں جو کہ غلط ہے -لمبے وقت تک اگر آپ پروٹین نہ کھائیں تو جسم میں پروٹین کی کمی ہوجائے گی جو کہ کافی خطرناک ہے- اس لیے سلاد کھانے کا حصہ ہوسکتا ہے لیکن روزآنہ اسے کھانے سے ریپلس کرنا ٹھیک نہیں-

بیسٹ سلاد وہیں ہوتا ہے جس میں ہری سبزی ، ٹامٹر ، پیپرس، کھیرا، گاجر، وغیرہ ہو- لیکن سلاد کوئی پسند نہیں کرتا اس لیے اس میں ڈبے والے پھل، کریمی ڈریسنگ، فرائی نوڈلس یا چیز وغیرہ ہوتا ہے جو کہ بالکل غیر صحت مند ہے- ان میں کافی مقدار میں آئیل ، نمک، سوڈیم ہوتا ہے-

Tags: