Type to search

بزنس

الگ ہے یہ اکشے ترتیہ ، سونے کی جیولری بازار میں شروع ہوگا ڈیجیٹل لین دن کا دور

بزنس ڈسک،26اپریل (بھاشا) کورونا وائرس وبا کی وجہ سے ملک میں جاری لاک ڈاؤن کے درمیان اس اکشے ترتیہ سے گولڈ جیولری انڈسٹری میں ڈیجٹیل طور پر تاریخوں سے لین دین کے نئے دور کی شروعات ہوسکتی ہے۔ لاک ڈاؤن کی وجہ سے دوکانیں بند ہیں۔ اکشے ترتیہ کو سونا اور جیولری خریدنے کا شبھ موقع مانا جاتا ہے۔ ایسے میں اس دن آن لائن خریداری زور پکڑ سکتی ہے۔

اس درمیان کچھ تجزیہ کاروں کی رائے میں دیگر اثاثوں میں غیر یقینی صورتحال کو دیکھتے ہوئے سونا ایک محفوظ سرمایہ کاری بن گیا ہے اور قریب مستقبل میں سونے کی قیمت 48550 روپے فی دس گرام تک پہنچ سکتے ہیں۔ ورلڈ گولڈ کونسل کے ہندوستان کے منیجنگ ڈائریکٹر پی آر سوماسندرم نے کہا کہ سونے کے اونچی قیمت کی ، سامان کی ڈیلیوری میں روکاوٹ، شادی بیاہ کو لیکر غیر یقینی ، ذرائع آمدنی میں کمی اس بار کی اکشیا تریتیا میں سونے کی خریداری پر سنگین اثر ڈال سکتی ہے۔

حالانکہ کچھ ماہرین مانتے ہیں کہ جب دنیا میں چوطرفہ بے یقینی کا دور ہو تو ایسے میں سونے میں توجہ جاتا ہے۔ ایم کے گلوبل فنانشل سروسز کے ریسرچ کے سربراہ راہول گپتا کا کہنا ہے کہ لاک ڈاؤن کی وجہ سے اس اکشیا تریتیا پر بے شیک مانگ کم رہ سکتی ہے لیکن آنے والے وقت میں قیمت اوپر جائے گی۔

Tags:

You Might also Like