Type to search

تلنگانہ

عوام تک خبر پہچانے والے پہلے خود ہوشیار رہے: کویتا

kavitha

حیدرآباد،21اپریل (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) نظام آباد کی سابق رکن پارلیمنٹ کے کویتا کے کورونا وائرس انفکیشن ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے ردعمل ظاہر کیا۔انہوں نے کہا کہ یہ بدقسمتی کی بات ہے کہ ہر وقت کی خبر دینے والے، ہمیں کورونا کے لیے اطلاع کرنے والے صحافی ہی کورونا کی زرد میں آگئے ہیں۔

کویتا نے اسی موضوع پر ٹیوٹر پر پوسٹ کیا۔ اپنے ٹیوٹ میں انہوں نے لکھا کہ ممبئی میں صحافی کا کورونا مثبت ہونا بے حد بدقسمتی ہے۔ کورونا کے خلاف لڑائی میں صحافی آگے ہے اور وہ بڑی بہادری سے یہ لڑائی لڑ رہے ہیں۔ پر اس حادثے کے بعد صحافی دوستوں کو اپنا کام کرتے ہوئے لوگوں تک خبر پہنچاتے ہوئے احتیاط رکھنا چاہیئے۔

کے کویتا نے ٹیوٹ میں یہ بھی لکھا کہ عوام تک خبر پہچانے والے پہلے خود ہوشیار رہے۔ یہ تو سب عوام ہی ہے کہ ممبئی میں 53 صحافیوں کو کورونا سے انفیکشن ہونے کی اطلاع ملی ہے۔ بی ایم سی کی طرف سے پیر کو کیے گئے معائنہ میں یہ بات سامنے آئی۔ 16 سے 17 اپریل کو صحافیوں اور کیمرا مین سمیت کل 167 صحافیوں کی اسکرینگ کی گئی اور ان میں تقریبا 53 متاثر تھے۔

Tags:

You Might also Like