Type to search

صحت

ذیابطیس ڈائیٹ: بلڈ شوگر لیول کو کنٹرول کیسے کریں

curry-leaves-kadi-patta

ہیلتھ ڈسک، (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کری پتہ ہندوستانی ڈائیٹ میں استعمال کیا جانے والا مسالہ ہے۔ کری پتہ کا استعمال کھانےمیں مزے لانے کے لیے کیا جاتا ہے۔ مزے کے ساتھ ہی ساتھ کری پتہ آپ کی صحت کے لیے بھی فائدے مند ہے۔ آیوروید میں بھی کئی نسخوں میں استعمال کیا جاتا ہے۔ کری پتہ ایک اینٹی آکسیڈینٹ کے طور پر کام کرسکتا ہے۔ کری پتہ بیٹا کیروٹین جیسے اینٹی آکسیڈینٹ سے بھر پور ہوتا ہے۔ یہی وجہ ہے کہ کری پتہ دل کے بیماریوں ، انفیکشن کے ساتھ ساتھ ذیابطیس میں بھی راحت دلاتا ہے۔ اس کے ساتھ ہی ساتھ کری پتہ میں وٹامن سی بھی بھرپور پایا جاتا ہے۔ کری پتہ ٹائپ 2 میں فائدے مند ہوسکتا ہے۔

ڈاکٹر ہندوستان بی اگروال کی کتاب ہیلنگ اسپاسیس کے مطابق یونیورسٹی آف شکاگو کے تنگ سنٹر فار میڈیسن ریسرچ کی ایک تحقیق کے مطابق کری پتہ کے استعمال سے ہائی بلڈ پریشر شوگر لیول کو 45 فیصدی تک کنٹرول میں کیا جاسکتا ہے۔ کری پتہ ٹائپ 2 ذیابطیس مریضوں کے لیے اچھا ثابت ہوسکتا ہے۔ یہاں ہم بتار ہے ہیں کہ کیسے کری پتہ یا کڑی پتہ بلڈ گلوکوز اور ذیابطیس کو کنٹرول کرنے میں مددگار ہے۔

کری پتے میں اینٹی آکسیڈینٹ ہوتے ہیں۔ جو کہ فری ریڈیکل بیماریوں جو کہ آکسیڈیٹیو نقصان سے جڑی ہوں میں مشکل ڈالنے کا کام کرتے ہیں۔
کری پتہ میں وٹامن ، بیٹا کیروٹین اور کاربازول الکلائڈز ہوتے ہیں۔ یہ ٹائپ 2 جیسے بیماریوں میں مددگار ہوتے ہیں۔
ایک تحقیق کے مطابق کری پتے میں موجود انٹی ہائپر گلیسیمیک عنصر بلڈ شوگر لیول کو کنٹرول کرنے میں معاون ہیں۔
کری پتہ میں بھرپور مقدار میں فائبر ہوتا ہے۔ جو ہاضمہ کو بہتر بناتا ہے۔ یہ میٹابولزم کو بہتر بنانے میں مددگار ہے۔ جو بلڈ شوگر کو کنٹرول کرنے میں مددگار ہے۔
کری پتہ امیونٹی سسٹم کو بہتر بناتا ہے۔ بہتر امیونٹی سسٹم انسولین کے پھیلاؤ کو بہتر کرتا ہے۔

کیسے کریں کری پتے کا استعمال
آپ روز صبح خالی پیٹ کری پتے کے 10 پتے کھا سکتے ہیں۔
آپ چاہے تو روز صبح کری پتے کا جوس پی سکتے ہیں۔
اسکے علاوہ سبزی ، چاول اور سلاد میں بھی کری پتہ استعمال کیا جاسکتا ہے۔

 

(نوٹ: صلاح سمیت یہ مضمون صرف عام معلومات فراہم کرتی ہے۔ یہ کسی بھی طرح سے طبی رائے کا متبادل نہیں ہے، مزید معلومات کے لئے ہمیشہ کسی ماہر یا اپنے ڈاکٹر سے رجوع کریں۔ اردو پوسٹ اس معلومات کے لیے ذمہ داری قبول نہیں کرتا ہے۔ )

Tags:

You Might also Like