Type to search

تلنگانہ

کانگریس کا سنگین الزام ، تلنگانہ حکومت چھپا رہی ہے کورونا سے مرنے والوں کی تعداد

Uttam kumar reddy

حیدرآباد،5مئی (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) تلنگانہ کانگریس نے الزام عائد کیا ہے کہ کورونا سے مرنے والوں کی تعداد حکومت چھپا رہی ہے۔ اتنا ہی نہیں غلط اعداد وشمار کے ساتھ مرکزی حکومت کو رپورٹ بھیج رہی ہے۔ انہوں نے یہ بھی الزام لگایا کہ لاک ڈاؤن کے تناظر میں کے سی آر کی حکومت کسانوں سمیت سبھی تمام طبقات کی مدد کیے بنا نظر انداز رویہ اپنا رہی ہے۔

ریاست کے کانگریس صر اور رکن پارلیمنٹ اتم کمار ریڈی ، ملو ورکما بھٹی اور سابق وزیر ششی دھر ریڈی نے پیر کو تلنگانہ گورنر تاملیسائی سوندراراجن سے ملاقات کرکے وزیراعلی کے چندر شیکھر راؤ کے طرزعمل اور کورونا سے نمٹنے کے موضع کو لیکر ریاستی حکومت کی طرف سے برتی جارہی نرمی کی شکایت کی۔

کانگریس رہنماؤں نے گورنر سے گذارش کی کہ وہ اس موضوع کو لیکر فوری مداخلت کرکے کورونا سے مرنے والوں کے اصل اعداد وشمار کی جانچ کے احکام دیں۔ اسکے علاوہ کورونا سے مرنے والے لاشوں کو ٹیسٹ نہیں کرنے کے پچھے کہ مقصد کی بھی جانچ کروانے کا حکم دیا جائے اس موقع پر اتم کمار ریڈی نے گورنر کو ایک یادداشت سونپا، رہنماؤں نے گورنر سے تقریبا 45 منٹ تک مختلف موضوعات پر تبادلہ خیال کیا۔

اسکے بعد کانگریس رہنماؤں نے میڈیا سے کہا تلنگانہ میں کے سی آر نے جان بجھ کر کرونا ٹیسٹ کی تعداد کم کروا دی ہے۔ پڑوسی ریاست آندھراپردیش میں بڑی تعداد میں کورونا ٹیسٹ کروایا جارہا ہے۔ مگر تلنگانہ کے سی آر کے احکام پر 25ہزار سے کم لوگوں کا ٹیسٹ کروا کر کورونا کی تعداد اور مرنے والوں کی تعداد کو کم دیکھانے کی کوشش کی جارہی ہے۔

سوال کرنے والے اپوزیشن اور میڈیا کو کے سی آر دھمکی دے رہے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ کورونا کی روک تھام کے لیے پی ایم مودی ریاستوں کے وزرائے اعلی اور اپوزیشن رہنماؤں سے تبادلہ خیال کررہے ہیں مگر کے سی آر آج تک کسی بھی رہنماؤں سے صلاح نہیں لیا ہے۔

Tags: