Type to search

تلنگانہ

میڈیا پر برسے اسد الدین اویسی، کہا ۔ کوویڈ 19 کو مذہب کی شکل دی

حیدرآباد،2اپریل (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) ملک بھر میں کورونا وائرس کی وجہ سے لاک ڈاؤن کیا گیا ہے ۔ اسکے باوجود انفیکشن لوگوں کی تعداد بڑھتی جارہی ہے۔ کہاں جا رہا ہے کہ یہ اعداد تبلیغی جماعت کے مرکز میں شامل لوگوں کے کورونا مثبت ہونے کے بند بڑھ رہے ہیں۔ اس مذہبی پروگرام میں ہزاروں لوگوں کے شامل ہونے کی بات سامنے آئی ہے۔ اب اس معاملے پر آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین کے سربراہ اسد الدین اویسی نے اپنا ردعمل دیا ہے۔
انہوں نے میڈیا پر سوال کھڑے کرتے ہوئے کہا، کچھ میڈیا والے مرکزی حکومت کی چاپلوسی کرنے کی وجہ سے کوویڈ 19 کو لیکر جھوٹا پروپیگنڈا چلا رہے ہیں۔ انکو انسانیت سےکوئی لینا دینا نہیں ہے۔ سچ کہے تو کوویڈ 19 کا کوئی مذہب نہیں ہے۔

اویسی نے آگے کہا، آپ لوگ ان پر انگلی اٹھ سکتے ہیں۔ جنہوں نے اس پروگرام کو منعقد کیا تھا۔ مگر انکی وجہ سے پورے مذہب کو بدنام کرنا بہت غلط ہے۔ یہ میڈیا کا جھوٹا پروپیگنڈا ہے۔ انہوں نے میڈیا سے التجا کرتے ہوئے کہا کہ برائے کرم 15 دنوں تک ہندو۔مسلم نہ کریں۔ فی الحال ملک میں بہت بڑی آفت آئی ہوئی ہے۔ اسکے بعد ہمیشہ کی طرح آپ ہندو۔مسلم کرتے رہیئے۔

کورونا وائرس کی وجہ سے تبلیغی جماعت کے جن 8 لوگوں کی موت ہوئی ہے۔ انہیں اویسی نے شہید کا درجہ دیا۔ اویسی نے کہا کہ جو 8 لوگ شہید ہوئے ہیں۔ ان میں سے 4 لوگوں کا پورا خاندان کورونا وائرس سے متاثر ہے۔ حکومت ان سبھی کو کورنٹائن میں رکھ رہی ہے ۔جو کہ دہلی کے پروگرام میں حصہ لینے گئے تھے۔

Tags:

You Might also Like