Type to search

تلنگانہ

کورونا: کے سی آر نے کہا – زیادہ قیمت پر سامان فروخت کرنے والی دکانیں ہونگی سیز

تلنگانہ چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ

حیدرآباد،24مارچ(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) تلنگانہ کے وزیراعلی کے چندر شیکھر راؤ نے کہا کہ ریاست میں فی الحال صورتحال قابو میں ہے، لیکن ہمیں احتیاط برتنے کی سخت ضرورت ہے- انہوں نے کہا کہ پچھلے ایک مہینے میں بیرون ملک سے پہچے قریب 19 ہزار سے ذیادہ لوگوں کی پہچان کرلی گئی ہے- اور انہیں کورنٹائن میں رکھنے کی کوشش جاری ہے- انہوں نے کہا کہ کورونا وائرس کے خلاف لڑائی مں صرف اہلکار دیکھائی دے رہے ہیں- لیکن اس میں گرام سرپنچ، ایم پی ڈی او، سے لیکر کلکٹر تک سبھی میدان میں اترنا چاہیئے اور لوگوں کو بھی غیر ضروری گھروں سے باہر نہیں نکل کر اپنا تعاون دینا چاہیئے-

انہو ںنے کہا کہ کورونا وائرس کو لیکر اور امریکی ملکوں میں ایمرجنسی کے دوران لوگوں کو سڑکوں پر پہچنے سے روکنے کے لیے شوٹ ایٹ سائٹ کے احکام دیئے گ،ے ہیں- انہوں نے کہا کہ تلنگانہ میں اگر لوگ غیر ضروری سڑکوں پر لوٹنے کی عادت نہیں چھوڑیں گے ہمیں بھی شوٹ ایٹ سائٹ جیسے کاروائی پر اترنا پڑے گا- انہوں نے کہا کہ صحت جیسی ہنگامی حالات میں خود پولیس گاڑیوں کی سہولت کی جائے گی- انہوں نے ایمرجنسی وقت میں 100 نمبر پر ڈائل کرنا چاہیئے-

وزیراعلی نے ذیادہ قیمت پر سبزیوں اور دیگر روز مرہ کی چیزیں فروخت کرنے والے کاروباریوں کو سخت انتباہ دیتے ہوئے کہا کہ ذیادہ قیمت پر سبزیاں فروخت کرنے والوں کے خلاف پی ڈی ایکٹ کے تحت معاملے درج کیے جائیں گے- ساتھ ہی انکی دوکانیں بند کردی جائیں گی- اور مستقبل میں وہ کبھی کچھ نہیں کرسکیں گے- انہوں نے بتایا کہ فی دن شام 7 بجے سے صبح 6 بجے تک کرفیو لگا دی گئی ہے- انہوں نے کہا کہ سبھی کرانے کی دوکانوں کو شام 6 بجے بند کرنی چاہیئے اور 6 بجکر ایک منٹ پر اگر دوکانیں کھلی رہیں گی تو انکے لائسنس منسوخ کردیئے جائیں گے-

Tags:

You Might also Like