Type to search

ٹی وی اور فلم

اداکارہ برکھا مدن بالی ووڈ میں نام کمانے کے بعد انڈسٹری سے بنالی دوری

برکھا مدن

فلمی ڈسک، 16 ستمبر (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) بالی ووڈ اور ٹی وی کی کئی اداکاراؤں نے انڈسٹری میں خوب نام کمانے کے بعد انڈسٹری کو الوداع کہا، کسی نے خود کا بزنس شروع کیا تو کسی نے پروڈکشن ہاؤس کھولا تو کسی نے مذہب کی طرف متوجہ ہوگئے۔ ایسی ہی ایک اداکارہ ہے جو بالی ووڈ میں اکشے کمار کے ساتھ اپنا ڈیبیو کیا تھا اور وہ اداکارہ ہے برکھا مدن۔

سال 1996 میں آئی اکشے کمار اور برکھا کی فلم کھلاڑیوں کا کھلاڑی، یاد ہے؟ اس میں برکھا بھی ایک اہم چہرا تھی- انہوں نے اپنی پہلی ہی فلم سے ہر کسی کا دل جیت لیا تھا-

برکھا مدن ، ماڈل، اداکارہ ، فلم پروڈیوسر تھی، ہندی اور پنجابی فلموں میں کام کیا، کئی ٹی وی سیریلس میں بھی نظر آئی اور کئی شوز کو ہوسٹ بھی کیا-

لیکن برکھا کی قسمت میں سینما کی رونق نہیں، بلکہ سادگی اور سکون لکھا تھا- وہ بدھسٹ کے نظریہ سے بہت متاثر ہوئی، یہی وجہ رہی کہ 10 سال پہلے انہوں نے ایک دوسری راہ پکڑ لی- وہ بدھسٹ نن بن گئی اور نام بدل کر گیلٹن سیمٹن رکھ لیا-

برکھا مدن کی پیدائش 17 اگسٹ 1974 میں ایک پنجابی گھرانے میں ہوئی- وہ مس انڈیا مقابلے 1994 میں فاتح رہی سشمیتا سین اور ایشوریہ رائے کے ساتھ فائنلسٹ بنی تھی-

اس سال دیگر شرکاء میں پریا گل، شویتا مینن، جیسی رندھاوا اور مانینی ڈے تھی- برکھا مس ٹورزم انٹرنیشنل کی نن رہی تھی-

ایک کامیاب ماڈل بننے کے بعد برکھا نے سال 1996 میں بالی ووڈ فلم کھلاڑیوں کا کھلاڑی سے ایکٹینگ کی شروعات کی-

اس فلم میں اکشے کمار اور ریکھا لیڈ رول میں تھے، برکھا فلمی دنیا میں اپنی جگہ بنانے کے لیے بالکل تیار تھی-
اداکارہ برکھا کو انکی پہلی فلم میں زبردست ایکٹینگ کے لیے تعریف ملی، انہیں کئی آفرس بھی ملے- برکھا نے غیر ملکی فلموں میں قدم رکھا، برکھا نے سال 2000 میں ریلیز ہوئی انڈو-ڈچ فلم ڈرائیونگ مس پالمین میں نظر آئی-

برکھا مدن صرف فلموں کا نہیں، بلکہ ٹی وی انڈسٹری کا بھی مشہور نام رہی، وہ قریب 20 سیریلس میں نظر آئی،
برکھا بدھ مذہب کے نظریات سے بہت متاثر تھی اور دلائی لامہ کی فالوور ہے- سال 2012 میں انہوں نے بدھ راہبہ (نن بننے کا ذہن بنالیا-

برکھا مدن کے کیریئر میں رام گوپال ورما کی ہارر فلم بھوت (2003) ٹرننگ پوائنٹ ثابت ہوئی- انہوں نے فلم میں بھوت کا کردار نبھایا تھا-

اسکے بعد برکھا نے پروڈکشن اور ڈسٹری بیوشن کمپنی گولڈن گیٹ ایل ایل سی، کی شروعات کی، جسکے تحت باصلاحیت اور خودمختار فلم سازوں کو آگے بڑھنے کے لیے پرموٹ کیا گیا- اس کمپنی نے دو فلمیں سوچ لو(2010) ، اور سرخاب (2012) بنائی، جس میں وہ لیڈ رول میں تھی-

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *