Type to search

ٹی وی اور فلم

کنگنا رناوت برتھ ڈے اسپیشل: بالی ووڈ میں بنائی اپنی الگ جگہ

کنگنا رناوت

فلمی ڈسک،23مارچ(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کنگنا رناوت نہ صرف فلم انڈسٹری میں لمبی اور مضبوط انگیز قائم کی ہے۔

بلکہ ایک انسان کے طور پر بھی کافی پختہ ہوئی ہے۔ چاہے فلموں کا سلیکشن ہو یا کسی معاملے پر رائے رکھنی ہو کنگنا بولڈ فیصلے لیتی ہے۔

اس وجہ سے انہیں کئی بار متناعات کا سامنا کرتنا پڑا ہے۔ آج 23مارچ کو انکی پیدائش ہے۔

کنگنا رناوت منالی کے ایک چھوٹے سے ٹاؤن میں 23مارچ 1986 کو پیدا ہوئی تھی۔

وہ ایک کنزرویٹو فیملی سے ہے اور انکا ایکٹینگ کی فیلڈ میں جانا کسی کو پسند نہیں تھا۔

اپنے اداکاری کے کیریئر کا آغاز دہلی میں اسمیتا تھیٹر گروپ سے کی،

کنگنا ایک راجپوت گھرانے سے ہے۔ انکی ماں آشا رناوت ایک اسکول ٹیچر ہے۔

اور والد امردیپ رناوت بزنسمین ہے۔ انکی بڑی بہن رنگولی ہے۔

کنگنا اپنی فیملی کی مرضی کے خلاف فلم انڈسٹری میں آئی۔

ایک انٹرویو کے دوران کنگنا نے بتایا تھا کہ انکے خاندان سے کبھی ان کو ذیادہ پیار محبت نہیں ملی۔

کیونکہ وہ منہ پھٹ تھی اس لیے انکے خاندان والے پریشان رہتے تھے۔
کنگنا کئی انٹرویوز کے دوران اپنی لائف کے جدوجہد کو بتا چکی ہے۔

رپورٹس کی مانیں تو وہ چھوٹی عمر میں گھر سے بنا پیسے لیے نکل گئی تھی۔

ممبئی میں انہوں نے لوکل ٹرین، آٹو اور ٹیمپو سب سے ذیادہ دھکے کھائے ہیں۔

اسکے علاوہ وہ فٹ پاتھ پر بھی سوئی ہے۔ کنگنا بتاتی ہے کہ انہوں نے کبھی آٹو ، ٹیمپو سے ممبئی دیکھا ہے اور اب بی ایم ڈبلیو سے دیکھتی ہے۔ دونوں میں کافی فرق دیکھتا ہے۔

آپ کو یہ جان کر حیرانی ہوگی کہ کنگنا کو کبھی نہانا بالکل پسند نہیں تھا۔

وہ اکثر نہیں نہاتی تھی۔ وہ بہت السی بھی تھی۔ انہوں نے بتایا کہ اس دور میں انکے ساتھ کچھ بھی اچھا نہیں ہورہا تھا۔ اسکے بعد انہوں نے ایلیمنٹ، کمپوزیشن اور انرجی کے بارے میں پڑھا۔

فلم انڈسٹری میں آنے پر کنگنا کا شروعاتی تجربہ کافی مشکل تھا۔

وہ بتاتی ہے کہ انکو چیزوں کی سمجھ نہیں تھی۔

انٹرویو کے دوران کنگنا نے ایک واقع بتایا کہ گینگسٹر کے بعد ایک فلم میگزین نے ایک فوٹو شوٹ کے لیے فون کیا ۔ کنگنا نے ان سے پوچھا دیا کہ اسکے لیے وہ انہیں کتنے پیسہ دیں گے۔ اس پر اس صحافی نے ہنستے ہوئے فون رکھ دیا۔ کنگنا بتاتی ہے کہ وہ پوری رات روتی رہی تھی۔ انہوں نے بتایا مجھے پتہ ہی نہیں تھا کہ پیسے نہیں پوچھے جاتے ہیں۔

کنگنا کا کہنا ہے کہ انڈسٹری میں آنے کے بعد وہ بہت پریشان رہتی تھی،

اور صدمے رہی، وہ سوچتی تھی کہ باقی لڑکیوں ان پر ہنستی کیوں ہے؟

انہیں لگتا تھا، کیا میں غلط انگلیش بولتی ہوں یا میری آواز عجیب ہے؟
کنگنا کئی تعلقات میں رہی ہے۔

ایک انٹرویو کے دوران انہوں نے بتایا تھا کہ مردوں میں ایک عام چیز ہوتی ہے ان ۔سیکیوریٹی ۔ کنگنا کو لگتا ہے کہ انکی لائف میں آنے والے مرد کنگنا کی کامیابی سے ان۔سیکیور ہوجاتے ہیں۔ انہوں نے یہ بھی کہا تھا کہ مردوں کو کبھی مہنگے گفٹ نہیں دینے چاہیئے۔ اس سے انکے انا کو تکلیف ( ایگو ہرٹ) ہوجاتی ہے۔

کنگنا نے ایک انٹرویو کے دوران یہ بھی بتایا تھا کہ شادی شدہ مرد کیسے لڑکیوں کو پھساتے ہیں۔

انہوں نے بتایا کہ جب لڑکیوں نوجوان ہوتی ہے تو ایسے مردوں کے رونے۔دھونے میں آجاتے ہیں۔

وہ کہیں گے کہ انکی بیوی انہیں مارتی ہے یا ایسا ہی کچھ۔ وہ خود کو گیا۔

گذرا اور بیوی کو ظالم بتاتے ہیں۔ خواتین کو اس طرح کی بکواس میں نہیں آنا چاہیئے۔

کنگنا نے یہ بھی کہا کہ انہیں سننا پڑتا ہے یہ سب اور وہ آج تک کسی خوش شادہ شدہ مرد سے نہیں ملے۔

حالانکہ کنگنا بتاتی ہے جب لڑکیاں 15 سے 25 سال کی ہوتی ہے تو مثالی شوہر پانے کی فطری رجحانات کے چکر میں پھنس جاتی ہے ۔ وہ یہ بھول جاتی ہے کہ وہ پہلے سے ہی کسی کے شوہر ہے۔

کنگا رناوت نے جھانسی کی رانی، رنگون، تنو ویڈس منو، کرش ، ڈبل دھمال، ریڈی، گیم، نو پرابلم، راز۔دی مسٹری، فیشن، لائف ان اے میٹرو ، وغیرہ جیسی فلموں میں کام کیا ہے۔

Tags:

You Might also Like