Type to search

ٹی وی اور فلم

اپنی فلموں سے خاص شناخت بنائی ساجد نڈیاڈوالا نےبرتھ ڈے اسپیشل:

فلمی ڑسک ، 18 فروری (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) ساجد نڈیاڈوالا بالی ووڑ کے سب سے ذیادہ معروف پروڈیوسروں میں سے ایک ہے- لیکن وہ اس سے کہیں ذیادہ ہے- ساجد بہت قابل ہے اور انہوں نے نہ صرف الگ الگ چیزوں میں اپنا ہاتھ آزمایا ہے، بلکہ اس میں کامیابی بھی حاصل کی ہے-

ایک پروڈیوسر کے طور پر، ساجد نے بالی ووڈ میں کچھ بہترین فلموں کے ساتھ اپنا تعاون دیا ہے- چاہے وہ مواد سے لیس فلموں ہو یا بڑے پیمانے پر تفریع کرنے والی فلمیں، اور اسکی تازہ ترین مثال سپر 30، چھچھورے، جو زبردست مواد کے ساتھ باکس آفس پر ہٹ ثابت ہوئی تھی- اور انکی ہاؤس فل 4 سال 2019 کی سب سے بڑی کامیڈی فلم تھی-

ممبئی میں 18 فروری 1966 کو پیدا ہوئے ساجد نے بطور ڈائریکٹر اپنے کیرئر کی شروعات 1992 میں فلم ظلم کی حکومت سے کی۔ فلم کو باکس آفس پر اوسط کامیابی ملی۔

اس کے بعد ساجد نے وقت ہمارا ہے، آندولن جیسی فلمیں بنائیں۔ ان فلموں کو بھی باکس آفس پر کوئی خاص کامیابی نہیں مل پائی۔ سال 1992 میں ساجد نے فلم اداکارہ دویا بھارتی سے شادی کرلی۔ 1993 میں دویا بھارتی کی خودکشی کے بعد ساجد کو گہرا صدمہ پہنچا۔ سال 1996 میں فلم جیت ساجد کی پہلی سپر ہٹ فلم ثابت ہوئی۔ اس فلم میں سنی دیول، کرشمہ کپور، تبو اور سلمان خان کے اہم رول تھے۔ جیت کی کامیابی کے بعد سلمان ساجد کے عزیز اداکار بن گئے اور انہوں نے اپنی تقریباً ہر فلم میں سلمان کو کام کرنے کا موقع دیا۔ سال 1997 میں ساجد نے سلمان کے ساتھ فلم جڑواں بنائی۔ اس فلم میں سلمان خان کا ڈبل رول تھا اور یہ فلم باکس آفس پر سپر ہٹ ثابت ہوئی۔