Type to search

ٹی وی اور فلم

‘عاشقی’ گرل انو اگروال نے 20 سال کے مشکل دور کی سنائی داستان

فلمی ڈسک،12جون(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) انو اگروال 90 کے دہائی میں ینگ اسٹارس کو عاشقی سیکھانے والی انو اگروال لمبے وقت سے پردے سے دور ہیں- اس اداکارہ کا لک بالکل بدل چکا ہے- آخری بار سال 1996 میں فلم ریٹرن اآف جیول تھیف، میں نظر آئی انو نے اپنے 7 سال کے کیریئر میں ہندی کے ساتھ تامل سینما میں بھی ہاتھ آزمایا- اتنا ہی نہیں وہ ٹی وی پر بھی کام کرچکی ہے- انو نے سوشل میڈیا پر ایک ویڈیو شیئر کیا ہے- جس میں وہ اپنے زندگی کے تجربے ، درد بیاں کررہی ہے-

انو اگروال نے ویڈیو میں کہا کہ مجھے ملک کی پہلی سپر ماڈل ہونے کا تمغہ حاصل ہے- وہ کہتی ہے کہ اس دور میں ڈیجیٹل میڈیا کی اتنی دستیابی نہیں تھی- اگر اس دوران ڈیجیٹل اور سوشل میڈیا ہوتا ہے تو اس بات کی معلومات سب کو ہوتی کہ میں ملک کی پہلی سپر ماڈل ہوں- بلیو جینس میں اآ،ی میری فوٹو اس وقت لوگوں کے ذہنوں میں تھی- انو کہتی ہے کہ میں نے خواتین کو با اختیار بنانے کے لیے بھی کام کیا ہے-

 

سال 1999 میں انو اگروال اپنے حادثے کی خبر ک ولیکر سرخیوں میں آئی- ایک حادثہ بے حد خطرناک تھا- حادثے میں نہ صرف انو اگروال کی یادداشت چلی گئی- بلکہ 29 دن تک وہ کوما میں رہی- انو نے اپنی کتاب ‘Anusual’ Memoir of a girl, who came back from the death میں اپنی زندگی کے اس درد بھرے دور کے تجربے کو شیئر کیا ہے-