Type to search

بین الاقوامی

انیتا اندرا آنند بنی کینیڈا کی پہلی ہند وزیر

کینیڈا،21نومبر(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کینیڈا کے وزیر اعظم جسٹن ٹروڈو نے چہارشنبہ 20 نومبر کو اپنے نئے کابینہ کی معلومات دی۔ منتخب کیے گئے 7 نئے چہروں میں ہندوستان کی انیتا اندرا آنند بھی ایک ہے۔ انیتا کابینہ وزیر بننے والی پہلی ہندو خاتون ہے۔  ویسے وہ صرف اکیلی ہندوستانی نہیں، بلکہ جسٹن کے وزرا میں تتین ہندوستانی۔کینیڈائی  وزیر بھی ہے۔ یہ تینوں ہی وزیر پچھلی حکومت کے رکن رہے چکے ہیں۔

لبرل پارٹی آف کینیڈا کے وفاقی وزیر کے طور پر منتخب ہوئی انیتا اسی سال پچھلے مہینے ہوئے کابینہ کے انتخابات میں پہلی بار ہی ہاؤس آف کامنس کے لیے منتخب ہوئی تھی۔ انکا انتخاب  صوبہ اونٹاریو سے ہوا ہے۔ اعلان میں بتایا گیا کہ انیتا کو کابینہ میں عوامی خدمات اور پروکیورمنٹ منسٹر کا عہدہ دیا جارہا ہے۔ اس سے پہلے وہ کینیڈائی میوزیم آف ہندو تہذیب کی صدر بھی تھیں۔

انیتا پہلی ہندو ہے، جنہیں کینیڈائی حکومت کی کابینہ میں شامل وہنے کا موقع ملا ہے۔ نووا اسکاٹیا صوبے کے کنٹیولی شہر میں پیدا ہوئی انیتا کے والدین دونو ں ہی ہندوستانی ہے۔ ماں پنجاب کے امرتسر اور والد تامل ناڈو سے ہے اور دونوں ہی پیشے سے ڈاکٹر ہے۔ حالانکہ چار بچوں کی ماں انیتتا نے الگ پیشہ چنا اور ٹورنٹو یونیورسٹی میں قانون کی پڑھائی پڑھی۔ ہندوستانی والدین کی بیٹی انیتا ہمیشہ کینیڈا میں بسسے ہندوستانی لوگوں سے جوڑی رہی اور انکے مسئلے دیکھتی رہی۔ ساتھ ہی وہ سوشل سرویس سے بھی جوڑ کر کام کرتی رہی۔