محمد سمیع مہاجر مزدوروں میں کھانا اور پانی تقسیم کررہے ہیں

اسپورٹس ڈسک،2جون(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کورونا وائرس وبا کے درمیان مہاجر مزدوروں کی تکلیف سے پریشان ہندوستان کے تیز گیندباز محمد سمیع نے اپنے گھروں کو لوٹ رہے ان مزدوروں کو کھانے کے پیکٹ اور ماسک باٹنا کرنا شروع کیا ہے۔ انہوں نے اترپردیش کے ساہسپور میں اپنے گھر کے پاس غریب مزدوروں کے لیے کیٹرنگ کی تقسیم کا مرکز بنائے ہیں۔ بی سی سی آئی نے سمیع کا ایک ویڈیو پوسٹ کیا ہے جو ماسک اور دستانے پہن کر پر بسوں میں جارہے لوگوں کو کھانے کے پیکٹ اور ماسک دے رہے ہیں۔

بورڈ نے لکھا، کورونا کے خلاف لڑائی میں محمد سمیع غریبوں کی مدد کے لیے آگے آئے۔ انہوں نے اترپردیش میں قومی شاہراہ 24 پر لوگوں کو کھانے کے پیکٹ اور ماسک بانٹے، انہوں نے اپنے گھر کے پاس فوڈ ڈیلیوری سینٹر بھی بنایا ہے۔ سمیع نے اپنے اس کام کو اپنا فرض بتایا ہے۔ اس وقت سمیع اپنے گاؤں میں ہے اور لاک ڈاؤن کے دوران سوشل میڈیا پر بھی ایکٹیو رہ کر ویڈیو اور فوٹو پوسٹ کرتے رہتے ہیں۔

بتادیں کہ کچھ دن پہلے یوجویندر چہل کے ساتھ لائیو چیٹ میں سمیع نے کہا تھا کہ جب مزدور لوگ پیدل گھر جانے لگے تھے تو ایک شخص انکے فارم ہاؤس کے دروازے پر آکر بے ہوش ہوگیا تھا۔ سمیع نے کہا کہ پھر ہم نے اس شخص کو کھانا کھلایا اور اسکی مدد کی۔

فوٹو:بی سی سی آئی کے شیئر ویڈیو سے لی گئی۔