عرفان خان کی والدہ سعیدہ بیگم انتقال کر گئیں، جے پور میں لی آخری سانس

فلمی ڈسک،26اپریل (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) بالی ووڈ ایکٹر عرفان خان کی والدہ سعیدہ بیگم کا آج انتقال ہوگیا۔ اداکار عرفان خان کی والدہ نے جے پور میں اپنے رہائش گاہ پر آخری سانس لی۔ وہ 95 سال کی تھی۔ بتادیں کہ سعیدہ بیگم کچھ عرصے سے علیل تھیں۔

لیکن اس دوران ان کے بیٹے اور بالی ووڈ اسٹار عرفان خان اس وقت ملک میں نہیں ہیں اور وہ بیرون ملک پھنسے ہوئے ہیں۔ افسوس کی بات یہ ہے کہ کورونا وائرس لاک ڈاؤن کی وجہ سے ، وہ ملک بھی واپس نہیں آسکتے ہیں۔ اسی وجہ سے ، اداکار اپنی والدہ کے آخری دیدار کے لیے جے پور نہیں آپائیں گے۔ جیسے ہی ‘پِکو’ کے ہدایتکار شوجیت سرکار کو یہ خبر ملی، اسکے بعد انہوں نے کہا کہ مجھے افسوس ہے … میی عرفان سے بات نہیں ہوئی ہے لیکنجل ان سے فون پر بات کرونگا۔

عرفان خان بھی پچھلے کافی وقت سے بیمار ہیں۔ وہ سال 2017 میں کینسر کا شکار ہوئے تھے۔ اسکے بعد وہ اس بیماری کے علاج کے لیے امریکہ چلے گئے تھے۔ اسی وجہ سے وہ بالی ووڈ فلم انڈسٹری سے بھی دور ہوگئے۔ حالانکہ اب وہ اس سنیگن بیماری پر جیت حاصل کرچکے ہیں۔ لیکن اسکے باوجود انکی طبعیت پوری طرح سے ٹھیک نہیں ہے۔ اس لیے وہ فلم انگریزی میڈیم کی ریلیز کے وقت بھی ایکٹرملک میں نہیں تھے۔

ایکٹر عرفان خان کی فلم حال ہی میں انگریزی میڈیم سینما گھر پر آئی تھی۔ حالانکہ کورونا وائرس لاک ڈاؤن کی وہ سے فلم کو کافی نقصان اٹھانا پڑا اور تھیٹرس بند ہونے کی وجہ سے فلم کی ریلیز پر بھی تالا لگ گیا تھا۔ ادھر ایکٹر فلم انگریز میڈیم کے ریلیز ہونے کے بعد دوبارہ بیرون ملک چلے گئے اور میڈیا رپورٹس کی مانیں تو وہ ابھی بھی اپنا علاج کروا رہے ہیں۔

خاص بات یہ ہے کہ عرفان خان کا فلم انگریزی میڈیم سینما گھر سے ہٹنے کے بعد ڈیجیٹل پلیٹ فارم کر دی گئی ہے۔ اس فلم کو ڈیجیٹل پلیٹ فارم پر ریلیز کرنے کے بعد بھی کافی اچھی رسپانس ملا ہے۔ فلم میں عرفان خان کے ساتھ کرینہ کپور، اور رادھیکا مدن اہم رول میں تھے۔