Type to search

قومی

مجلس کے ایم ایل سی سید امین الحسن جعفری تلنگانہ قانون ساز کونسل کے نئے پروٹیم چیئرمین مقرر

سید امین الحسن جعفری

حیدرآباد، 13 جنوری (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) تلنگانہ قانون ساز کونسل کے عبوری صدرنشین کے طورپر کل ہند مجلس اتحادالمسلمین کے رکن قانون ساز کونسل جناب سید امین الحسن جعفری نے ذمہ داری سنبھال لی۔

آل انڈیا مجلس اتحاد المسلمین (اے آئی ایم آئی ایم) کے، ایم ایل سی سید امین الحسن جعفری جمعرات کے روز تلنگانہ اسٹیٹ لیجسلیٹو کونسل کے (عبوری) پروٹیم چیئرمین کے طور پر چارج سنبھالا۔

گورنر تملائی ساؤندرا راجن نے چہارشنبہ کے روز سید امین الحسن جعفری کو پروٹیم چیئرمین مقرر کرنے کے احکامات جاری کیے جو 11 جنوری سے نافذ العمل ہوں گے۔ وہ تلنگانہ اسٹیٹ کونسل میں اس عہدہ پر فائز ہونے والے مسلم کمیونٹی کے پہلے امیدوار ہوں گے۔

 

ریاست کے 40 رکنی ایوان بالا میں اے آئی ایم آئی ایم کے پاس دو ایم ایل سی ہیں۔ سید امین الحسن جعفری گزشتہ 12 سالوں سے ایم ایل سی ہیں۔

تلنگانہ لیجسلیچر سکریٹری نرسمہا چاریولو نے بدھ کے روز جعفری سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی اور ان کے لیے چارج سنبھالنے کے لیے کیے جانے والے انتظامات پر تبادلہ خیال کیا۔

چیف منسٹر کے چندر شیکھر راؤ نے پروٹیم چیئرمین کی نشست کے لیے جعفری کے نام کو حتمی شکل دی، جو تلنگانہ کونسل کے سب سے سینئر ایم ایل سی میں سے ایک ہیں۔

بھوپال ریڈی کی میعاد 4 جنوری 2022 کو ختم ہونے کے ساتھ، جعفری کو پروٹیم چیئرمین مقرر کیا گیا ہے۔

بتادیں کہ اس سے قبل بھی، سی ایم کے سی آر نے اے آئی ایم آئی ایم کے ممتاز احمد خان کو ریاستی قانون ساز اسمبلی میں پروٹیم اسپیکر کا عہدہ دیا تھا، جو ریاست کے سب سے سینئر ایم ایل اے میں سے ایک ہیں۔

وزیر داخلہ محمد محمود علی، وزیر امور مقننہ پرشانت ریڈی،مجلسی ارکان اسمبلی سید احمد پاشاہ قادری، محمد معظم خان، جعفر حسین معراج،مجلس کے رکن قانون ساز کونسل ریاض الحسن آفندی، ٹی آرایس کے لیڈران کے ساتھ ساتھ سکریٹری مقننہ ڈاکٹرنرسمہلو اور کونسل کا اسٹاف بھی اس موقع پر موجود تھا۔

Leave a Comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *