Type to search

ٹی وی اور فلم

منوج باجپائی کو 44 ویں ڈربن فلم فیسٹیول میں زورم کے لیے بہترین اداکار کے ایوارڈ سے نوازا گیا

فلم زورم

فلمی ڈسک، 5 اگسٹ (اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) بالی ووڈ کو شول، گینگس آف واسے پور، دی فیمیلی مین جیسی فلمیں دے چکے بالی ووڈ کے مشہور اداکار منوج باجپائی کے کھاتے میں ایک نئی کامیابی درج ہوئی ہے۔ انہیں ڈربن انٹرنیشنل فلم فیسٹیول 2023 میں بہترین اداکار کا ایوارڈ ملا ہے۔ اداکار کو یہ ایوارڈ ان کی فلم ’زورم‘ کے لیے ملا ہے۔

 

 

 

منوج باجپائی کے علاو اس فلم کے لیے پیوش کو بہترین سنیماٹوگرافی کا ایوارڈ ملا ہے۔ زی اسٹوڈیو نے سوشل میڈیا پوسٹس کے ذریعے یہ معلومات شیئر کی ہیں۔

 

 

 

بالی ووڈ اداکار منوج کو جنوبی افریقہ میں 44 ویں ڈربن انٹر نیشنل فلم فیسٹیول میں فلم زورم کے لیے بہترین اداکار کے ایوارڈ سے نوازا گیا ہے۔

 

بتا دیں کہ دیواشیش مکھیجا کی ہدایت کاری میں بنی فلم ‘زورم’ ایک غریب آدمی کی کہانی ہے۔ یہ ایک تھرلر فلم ہے۔ فلم ایک ایسے شخص کے بارے میں ہے جو اپنی بیٹی کی حفاظت کے لیے بھاگ رہا ہے۔ جھارکھنڈ میں سیٹ کی گئی فلم سماجی عدم مساوات، قبائلی برادریوں کے ساتھ ہونے والی ناانصافی اور جنگلات کی کٹائی جیسے مسائل سے متعلق ہے۔

 

اداکار منوج باجپائی کے علاوہ اس فلم میں ذیشان ایوب،  تنیشتھا چٹرجی، راجشری دیشپانڈے بھی خصوصی کردار ادا کر رہے ہیں۔ فلم ’زورم‘ میں کام کرنے کے تجربے کو شیئر کرتے ہوئے منوج باجپئی نے کہا، ’یہ فلم اپنے ماضی اور حال کے درمیان پھنسے ایک شخص کی دلچسپ کہانی ہے۔ مجھے ایسا پیچیدہ کردار ادا کرنا بہت اچھا لگا-

 

ڈربن فلم فیسٹیول سے پہلے فلم کی اسکریننگ 52ویں انٹرنیشنل فیسٹیول آف روٹرڈیم میں بھی ہوچکی ہے- سال 2022 میں یہ فلم این ایف ڈی سی فلم بازار کے ایف بی آر سیکشن میں ویو روم میں بھی شامل کی گئی تھی-

Tags:

You Might also Like