Type to search

قومی

یوپی کے دھنی پور گاؤں میں مسجد کے لئے اراضی دیئے جانے سے گاؤں میں خوشی کا ماحول

فیض آباد،7فروری(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) اترپردیش کے فیض آباد یعنی ایودھیا کے دھنی پور گاؤں میں مسجد کی تعمیر کے لیے زمین الاٹ کیے جانے سے خوش ہے۔ انہیں خوشی ہے کہ یہاں مسجد بننے بعد انکا گاؤں دنیا بھر میں مشہور ہوجائے گا۔ یوپی حکومت نے مسجد کی تعمیر کے لیے دھنی پور میں زمین الاٹ کی ہے۔ گاؤں والوں کو اب امید ہے کہ مسجد بنانے پر انکے گاؤں کو دنیا بھر کے لوگ جاننے لگیں گے۔ ایودھیا کے رام جنم بھومی بابری مسجد زمین معاملے میں سپریم کورٹ نے متنازعہ مقام کی ساری زمین مند کو دینے اور مسجد تعمیر کے لیے پانچ ایکڑ زمین مسلم طبقے کو دینے کا فیصلہ دیا ہے۔

اترپردیش حکومت کے ترجمان شریکانت شرما کے مطابق ریاستی حکومت نے لکھنؤ شاہراہ پر ایودھیا میں سوہوال تحصیل کے دھنی پور گاؤں میں زمین کا الاٹمنٹ پیپر سنی وقف بورڈ کو دے دیا ہے۔ زمین کا یہ ٹکڑا ضلع صر سے 18کلومیٹر دور ہے۔
دھنی پور گاؤں کے صدر راکیش یادو نے میڈیا سے کہا، مسجد میں دنیا بھر کے لوگ آئیں گے اور اس سے ہمارا گاؤں مشہور ہوجائے گا۔ صرف مسلم ہی نہیں ہندو لوگ بھی مسجد کا استقبال کرنے اور اسکی تعیمر میں مدد دینے کو تیار ہے۔