Type to search

بین الاقوامی

انڈونیشیا: 103 سالہ شخص نے 27 سالہ لڑکی سے کی شادی، جہیز کی رقم سب کو حیران کردے گی

انڈونیشیا،8مارچ(اردو پوسٹ انڈیا ڈاٹ کام) کئی بار آپ نے لوگوں سے یہ کہتے سنا ہوگا کہ عمر سب ایک نمبر ہوتا ہے اسکے علاوہ کچھ نہیں، اسکی اہمیت کیا ہے، انڈونیشیا کے رہنے والے 103 سالہ پوآنگ کٹے نے، وہ قریب 76 سال چھوٹی یعنی 27 سال کی خاتون سے شادی کرکے دنیا بھر میں بحث کا موضوع بن گئے ہیں، سوشل میڈیا پر انکی شادی کی تصویر خوب وائرل ہورہی ہے-

میڈیا رپورٹس کے مطابق پوآنگ ایک ڈچ کولونیل ہے- انہوں نے 1949-1945 کی لڑائی میں حصہ لیا تھا، 27 سالہ دلہن انڈو النگ کے ایک رشتہ دار نے بتایا کہ انہیں یہ نہیں پتہ تھا کہ دولہے (پوآنگ) کی عمر کتنی ہے، لیکن انہیں اتنا ضرور پتہ تھا کہ اسکی عمر 100 کے پار ہوگی-

شادی کے بعد دولہا- دولہن کی صحیح عمر کا خلاصہ ہوا، تو سب حیران ہوگئے، بتایا جارہا ہے کہ دولہا بن پوآنگ نے لڑکی والوں کو جہیز بھی دیا ہے، انہوں نے قریب 25 ہزار روپے اور ایک سونے کی انگھوٹی دے کر خاتون سے شادی کی، لینٹاس آئی نیوز کے مطابق بزرگ پوآنگ کی خاتون سے اس وقت پہلی بار ملاقات ہوئی ، جب ہو اپنے بوائے فرینڈ سے بریک اپ کرنے جارہی ہے تھی ، کیونکہ وہ اسے دھوکہ دے رہا تھا، اسکے بعد دونوں کے درمیان نزدیکیاں بڑھی اور جسمانی تعلقات بھی بن گئے، اس دوران خاتون نے پایا کہ وہ حاملہ ہے، جسکے بعد انہوں نے شادی کرنے کا فیصلہ کیا- اگر آپ کو یہ جاننا کی خواہش ہورہی ہے کہ کیا دادا کی عمر کا یہ بزرگ والد بننے ولا ہے ، تو اسکا جواب ہے ہاں، 103 سالہ پوآنگ ایک غیر پیدائشی بچے کے والد ہے،

مقامی میڈیا کے مطابق پوآنگ کی نئی دولہن کی یہ دوسری شادی ہے، انہوں نے اپنے شوہر سے طلاق لے لیا تھا، کیونکہ وہ انکی توہین کرتا تھا اور شاید انہیں مارتا پیٹتا بھی تھا، بتایا جارہا ہے کہ فی الحال پوآنگ اور انکی نئی دولہن جنوبی سولوسی میں پوآنگ کے گھر پر آرام سے رہ رہی ہے-